سندھ ہائیکورٹ نے سانحہ صفورا کے ملزمان کی بریت کے باوجود رہا نہ کرنے سے متعلق دائر درخواست پر آئی جی جیل خانہ جات اور سپرنٹنڈنٹ کو فوری طلب کرلیا۔

درخواست کی سماعت کے دوران سانحہ صفورہ کے الزام میں گرفتار ملزم سلطان قمر اور نعیم ساجد سندھ ہائیکورٹ میں پیش ہوئے۔دوران سماعت عدالت نے ریمارکس دیے کہ ملزمان کو کیسے ابھی تک جیل میں رکھا ہوا ہے ؟تمام دستاویزات عدالت میں پیش کی جائیں۔

عدالت نے مزید ریمارکس دیے کہ اگر دستاویزات پیش نہ کی گئیں تو ذمے داروں پر 10ہزار روپے روزانہ جرمانہ عائد کیا اور ملزمان کو رہا کرنے کا حکم بھی دے دیا جائے گا۔

درخواست میں موقف اختیار کیا گیا تھا کہ ملزمان کو ملٹری ٹرائل کورٹ نے بری کردیا لیکن تاحال انہیں رہا نہیں کیاگیا

SHARE

LEAVE A REPLY