سانحہ بارہ مئی کی منصوبہ بندی میں فاروق ستار کے بھی ملوث ہونے کا انکشاف ہوا ہے ۔ گرفتار متحدہ رکن اسمبلی کامران فاروقی نے بڑا بیان دے دیا۔
ایم کیوایم رہنماؤں پر ایک کے بعد ایک کیس بنائے جارہے ہیں۔متحدہ کے گرفتار رکن اسمبلی کامران فاروقی کے بیان نے ایم کیوایم پاکستان کے سربراہ کیلئے ممکنہ مشکل کھڑی کردی۔
کامران فاروقی نے دوران تفتیش انکشاف کیاہے کہ سانحہ بارہ مئی کی منصوبہ بندی میں ڈاکٹر فاروق ستار بھی ملوث ہیں۔انھوں نے بیان دیا کہ دس مئی دو ہزار سات کو منصوبہ بندی کیلئے اجلاس ہوا جس میںفاروق ستار، حماد صدیقی، اعجاز شاہ، عابد چیئرمین، فرحان شبیر شریک تھے۔اجلاس میں صاف ہدایت ملی کہ قتل عام کرو یا کراچی بند کرو، وکلاء کو ایئرپورٹ نہ پہنچنے دو۔
طاہر پلازہ میں آگ کیوں لگی؟ پر کامران فاروقی نے بتایاکہ وکیل رہنما نعیم قریشی کو سبق سکھانے کیلئے طاہرپلازہ کو جلایا گیا۔ ملزم نے یہ بھی انکشاف کیا کہ اسلحہ خریدنے کیلئے لیاری سیکٹر کو نائن زیرو سے پینتیس لاکھ روپے دیئے گئ

SHARE

LEAVE A REPLY