گیونی کا ایم 2017  نامی اسمارٹ فون اس وقت دنیا کی طاقتور ترین بیٹری والی ڈیوائس ہے۔

اس فون کے ساتھ 7000 ایم اے ایچ بیٹری دی گئی ہے جبکہ آج کل بیشتر فونز دو ہزار سے تین ہزار ایم اے ایچ سے زیادہ بیٹری نہیں رکھتے، بلکہ اس چینی موبائل کی بیٹری بیشتر ٹیبلیٹس کی بیٹری سے بھی زیادہ طاقتور ہے۔

کمپنی کا دعویٰ ہے کہ اس فون سے لگاتار 32 گھنٹے تک بات اور 26 گھنٹے تک ویڈیو دیکھی جاسکتی ہے جبکہ عام استعمال کی صورت میں یہ فون ایک ہفتے تک بھی چل سکتا ہے۔

اس فون میں اسنیپ ڈراگون 653 پراسیسر اور چھ جی بی ریم بھی موجود ہیں۔

یہ درحقیقت ایک لگژری فون ہے جو فی الحال چین تک ہی محدود ہے مگر ہوسکتا ہے کہ مستقبل قریب میں اسے دنیا کے دیگر ممالک میں بھی فروخت کے لیے پیش کیا جائے، جس کی ابتداء قریبی پڑوسی ممالک سے ہو سکتی ہے۔

اس کی اسکرین ایج ٹو ایچ ٹیکنالوجی کی حامل ہے جو کہ سام سنگ کے گلیکسی ایس سیون ایج جیسی ہے جبکہ 12 اور 13 میگاپکسلز کے دو رئیر کیمرے موجود ہیں جن میں آئی فون سیون کی طرح کا 2x آپٹیکل زوم دیا گیا ہے۔

اس فون میں گولڈ بیک کیمرہ پلیٹ اور آل گولڈ سافٹ وئیرز آئیکون بھی دیئے گئے ہیں، جبکہ فنگر پرنٹ ریڈر بھی دیا گیا ہے اور 128 سے 256 جی بی اسٹوریج بھی دی گئی ہے۔

اس فون کی قیمت بھی ایک ہزار ڈالرز (ایک لاکھ روپے) کے لگ بھگ ہے مگر بیٹری کی طاقت کو دیکھتے ہوئے مناسب لگتی ہے۔

SHARE

LEAVE A REPLY