فلاحی تنظیم آکسفیم کے ایک جائزے کے مطابق دنیا بھر میں امیر اور غریب کے درمیان خلیج میں ڈرامائی اضافہ ہوتا جا رہا ہے۔ اس جائزے کے مطابق دنیا کے امیر ترین افراد اور عالمی آبادی کے غریب ترین نصف حصے کے درمیان خلیج اُس سے بھی زیادہ وسیع ہے

جتنا کہ اب تک خیال کیا جا رہا تھا اور صرف آٹھ ارب پتی شخصیات اتنی زیادہ دولت کی مالک ہیں، جتنی کہ 3.6 ارب انسانوں کے پاس ہے۔ غربت کے خاتمے کے لیے سرگرم عمل اس تنظیم کا یہ جائزہ آج سوئٹزرلینڈ کے تفریحی مقام ڈیووس میں پیش کیا گیا ہے، جہاں عالمی اقتصادی فورم کا سینتالیس واں سالانہ اجتماع سترہ جنوری منگل کے روز سے شروع ہو رہا ہے۔

SHARE

LEAVE A REPLY