جہاں میں ذکر زہرا ہو رہا ہے، بلال رشید

0
148

جہاں میں ذکر  زہرا  ہو رہا ہے
عدو کا ہر حواری رو رہا ہے

وہاں کیوں روضہ ء زہرا نہیں ہے
جہاں پر میرا آقا سو رہا ہے

نہ آئیں نام لب پر غاصبوں کے
سدا احساس یہ مجھ کو رہا ہے

مسلماں سیدہ کے در سے ہٹ کر
رضائے حق کا موقع کھو رہا ہے

برستی ہے فلک سے اس پہ لعنت
عدوئے سیدہ جو ہو رہا ہے

نتیجہ اس کا ہو گا کربلا سے
عدو جو فصل- تازہ بو رہا ہے

بلال آل – عبا کی کر کے باتیں
گناہوں کو تو اپنے دھو رہا ہے

بلال رشید

SHARE

LEAVE A REPLY