ساہیوال جیل میں کالعدم تنظیموں سے تعلق رکھنے والے تین خطرناک دہشت گردوں کو پھانسی دے دی گئی۔

پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ (آئی ایس پی آر) کے مطابق تینوں دہشت گرد قانون نافذ کرنے والے اداروں اور مسلح افواج پر حملوں میں ملوث تھے، جنھیں فوجی عدالت کی جانب سے سزا سنائی گئی۔

جن دہشت گردوں کو پھانسی دی گئی، ان کی تفصیلات کچھ یوں ہیں۔

سید زمان خان
مجرم کالعدم حرکت الجہاد اسلامی کا فعال رکن اور مسلح افواج پر حملوں میں ملوث تھا، جس کے نتیجے میں متعدد اہلکار ہلاک اور زخمی ہوئے جبکہ سرکاری املاک کو بھی نقصان پہنچا، مجرم نے اپنے جرائم کا اعتراف مجسٹریٹ اور ٹرائل کورٹ کے سامنے کیا اور اسے سزائے موت سنائی گئی۔

شوالے
مجرم کالعدم تحریک طالبان پاکستان (ٹی ٹی پی) کا فعال رکن اور قانون نافذ کرنے والے اداروں اور مسلح افواج پر حملوں میں ملوث تھا، جس کے نتیجے میں متعدد اہلکار ہلاک اور زخمی ہوئے، مجرم نے اپنے جرائم کا اعتراف مجسٹریٹ اور ٹرائل کورٹ کے سامنے کیا اور اسے سزائے موت سنائی گئی۔

محمد ذیشان
مجرم کالعدم حرکت الجہاد اسلامی کا فعال رکن اور مسلح افواج پر حملوں میں ملوث تھا، جس کے نتیجے میں متعدد اہلکار ہلاک اور زخمی ہوئے جبکہ سرکاری املاک کو بھی نقصان پہنچا، مجرم نے اپنے جرائم کا اعتراف مجسٹریٹ اور ٹرائل کورٹ کے سامنے کیا اور اسے سزائے موت سنائی گئی۔

آئی ایس پی آر کے مطابق فوجی عدالتوں کی جانب سے 161 دہشت گردوں کو سزائے موت سنائی گئی، جن میں سے 21 کو پھانسی دی جاچکی ہے۔

SHARE

LEAVE A REPLY