امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ آج منگل کے روز اپنے پیش رو باراک اوباما کے دور میں متعارف کرائے گئے ماحولیاتی تحفظ کے قانون کو واپس لینےکا اعلان کریں گے۔

وائٹ ہاؤس کے مطابق اس صدارتی اقدام سے امریکا میں اقتصادی سرگرمیوں میں اضافے کے ساتھ ساتھ روزگار کے مواقع پیدا ہوں گے اور عوام کو سستی بجلی کی فراہمی ممکن ہو سکے گی۔ ٹرمپ کے اس اعلان کو توانائی کے استعمال کی آزادی کا ایگزیکٹو آرڈر قرار دیا گیا ہے۔

اس طرح امریکا میں زمین سے حاصل ہونے والے فوسل فیول انڈسٹری کو تقویت حاصل ہو جائے گی۔ ٹرمپ آج کے ایگزیکٹو آرڈر میں تیل، گیس اور کوئلے کی پیدوار کے ساتھ ساتھ کاربن گیسوں کے اخراج پر عائد پابندی پر نظرثانی کے متعدد اقدامات کا بھی اعلان کرنے والے ہیں۔

SHARE

LEAVE A REPLY