مقبوضہ کشمیر میں لوک سبھا کے ضمنی ڈھونگ الیکشن کے تحت سری نگر بڈگام کی نشست پر آج ضمنی انتخاب کے موقع پربھارت سرکار نے سیکورٹی کا بہانا بنا کر 20ہزار اضا فی فوجی تعینات کر دیئے۔

دوسری جانب حریت رہنماؤں سید علی گیلانی، میرواعظ عمر فاروق اور یاسین ملک نے مقبوضہ وادی کے عوام سے نام نہاد اور ڈھونگ ضمنی انتخابات کا مکمل بائیکاٹ کرنے کی اپیل کی ہے۔

ادھر مقبوضہ کشمیر کی وزیر اعلیٰ محبوبہ مفتی نے کہا ہے کہ ان انتخابات کے دوران گڑ بڑ کرنے اور قانون کو ہاتھ میں لینے والوں کے ساتھ سختی سے نمٹا جائے گا ۔

مقبوضہ وادی کے علاقے اننت ناگ پلواما نشست پر ضمنی انتخاب12اپریل کوہوگا

دوسری طرف بھارتی فوج کی جیپ نے ایک کشمیری کرکٹر کو کچل کر شہید کر دیا۔ واقعہ سرینگر کے علاقے برین نشاط میں پیش آیا ۔ بھارتی پولیس کی گاڑی ایک کار پر چڑھ گئی جسکے نتیجے میں معروف کرکٹر محمد اشرف موقع پر شہیدہو گیا جبکہ اسکا ساتھی ارشد شدید زخمی ہوا۔ واقعہ کی خبر پھیلتے ہی لوگ مشتعل ہوگئے اور انہوں نے زبردست مظاہرے کئے۔ انہوںنے بھارت کے خلاف نعرے لگائے ۔ وہ مجرم بھارتی فوجیوں کو گرفتار کر کے کڑی سزا دینے کا مطالبہ کر رہے تھے۔ ریاستی عدالت نے کل جماعتی حریت کانفرنس کے سینئر رہنما اور جموں وکشمیر مسلم لیگ کے چیئرمین مسرت عالم بٹ کے عدالتی ریمانڈ میں 17اپریل تک توسیع کر دی۔کل جماعتی حریت کانفرنس کے چیئرمین سید علی گیلانی نے بھارتی پارلیمنٹ کے نام نہاد ضمنی انتخابات کے موقع پر9 اور 12 اپریل کو مکمل ہڑتال کی اپیل دہراتے ہوئے کہا ہے کہ بھارت نواز کشمیری رہنمائوںکو اپنی کرسی کے سوا کوئی اور چیز ہرگز عزیز نہیں

SHARE

LEAVE A REPLY