پاکستان کو تاریخ کے بلند ترین تجارتی خسارے کا سامنا ہے، ادارہ شماریات کے مطابق رواں مالی سال کے پہلے 9 ماہ کے دوران تجارتی خسارہ23ارب 38کروڑ ڈالر سے تجاوز کر گیا۔

ادارہ شماریات کا مزید کہنا ہے کہ جولائی سے مارچ تک برآمدات 15ارب 11کروڑ ڈالر رہیں، جبکہ جولائی سے مارچ تک درآمدات 38ارب 50کروڑ ڈالر سے زیادہ رہیں۔

ادارہ شماریات کا کہنا ہے کہ رواں مالی سال کے پہلے9 ماہ میں برآمدات میں 3اعشاریہ 6فیصد کمی ریکارڈ کی گئی، تجارتی خسارے میں گزشتہ سال کے مقابلے میں 38اعشاریہ 80فی صد اضافہ ہوا۔

ادارہ شماریات کا یہ بھی کہنا ہے کہ مارچ میں ایک ارب 80کروڑ ڈالر کی برآمدات ہوئیں، جبکہ درآمدات 5 ارب ڈالر سے زائد رہیں

SHARE

LEAVE A REPLY