عمران خان کا پاکستان چوک پر کارکنوں سے خطاب ۔اصل میچ 2 نومبر کو‘

0
216

پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کے چیئرمین عمران خان نے پاکستان چوک پر کارکنوں سے خطاب میں کہا کہ ’2 نومبر کو حکومت کو بتائیں گے کہ جمہوریت کیا ہوتی ہے‘۔

عمران خان بنی گالہ سے باہر نکلے اور وہ باہر موجود کارکنوں کے ہمراہ پاکستان چوک تک پیدل چل کر گئے جہاں انہوں نے مختصر خطاب کیا۔

کارکنوں اور صحافیوں سے بات کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ ’مجھے ایسے ہی پر عزم کارکنوں کی ضرورت ہے، کرپٹ مافیا کے خلاف جنگ جیت کر رہیں گے‘۔

چیئرمین پی ٹی آئی نے اپنی رہائش گاہ کے باہر جمع کارکنوں کے عزم اور حوصلے کی تعریف کی اور ان سے خیریت بھی دریافت کی۔

انہوں نے کارکنوں کو ہدایت کی کہ جتنے بھی لوگ اسلام آباد آرہے ہیں انہیں بتادیں کہ وہ کم تعداد میں اس راستے سے نہ آئیں کیوں کہ تھوڑی تعداد میں ہونے کی وجہ سے انہیں گرفتار کرلیا جاتا ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ اسلام آباد ہائی کورٹ کے واضح احکامات ہیں کہ گرفتاریاں نہ کی جائیں اور نہ ہی کنٹینر لگائے جائیں لیکن اس کے باوجود گرفتاریاں کی جارہی ہیں جو غیر قانونی ہیں۔

انہوں نے کہا کہ ’یہ نواز شریف کی ڈکٹیٹر شپ ہے جمہوریت نہیں، 2 نومبر کو وزیر اعظم کو بتائیں گے کہ جمہوریت کیا ہوتی ہے اور عوام کیا ہوتی ہے‘۔

عمران خان نے کارکنوں سے کہا کہ وہ ڈٹے رہیں اور پر عزم رہیں، حکومت کچھ بھی کرلے،سونامی کو نہیں روک سکتی‘۔

انہوں نے کارکنوں کو ہدایت کی کہ وہ گرفتار ہونے سے بچیں کیوں کہ اصل ہدف 2 نومبر ہے، سونامی کوئی نہیں روک سکے گا۔

عمران خان نے کہا کہ ’راولپنڈی میں نیٹ پریکٹس تھی، اصل میچ 2نومبر کو ہے‘۔

خیبر پختونخوا اور پنجاب کے مختلف علاقوں سے آنے والے کارکنوں نے پی ٹی آئی کے چیئرمین عمران خان کی رہائش گاہ کے باہر ہی کیمپ لگالیے ہیں۔

SHARE

LEAVE A REPLY