پنجاب بھر میں چھاپے، پی ٹی آئی رہنماؤں اور کارکنوں کی گرفتاریاں

0
212

پاکستان تحریک انصاف کا اسلام آباد لاک ڈاؤن پروگرام روکنے کیلئے پنجاب پولیس نے صوبہ بھر میں بڑے کریک ڈاؤن کا آغاز کردیا، رحیم یار خان کے بیلجیم چوک پر پولیس نے ایک مکان پر چھاپہ مار کر یوتھ ونگ پی ٹی آئی سینٹرل کمیٹی کے رکن مون چوہان کو دھر لیا۔

چنیوٹ کے امین پور بنگلہ سے مقامی رہنماء محمد افضل شاہ جبکہ ننکانہ صاحب کے علاقے بچیکی سے بھی مقامی لیڈر سہیل اسلم کو حراست میں لے لیا گیا، کہروڑ پکا اور دنیا پور میں بھی پولیس کا ایکشن جاری ہے، پی ٹی آئی کے 4 کارکن گرفتار کرلئے گئے۔

فیصل آباد میں پی ٹی آئی کارکنوں کی پکڑ دھکڑ کا سلسلہ جاری ہے، جھنگ روڈ سے جھنگ روڈ سے رہنماؤں ثناء اللہ اور میاں افضال کو گرفتار کرلیا گیا جبکہ پی ٹی آئی کے رکن پنجاب اسمبلی شیخ خرم شہزاد کے گھر پر بھی چھاپہ مارا گیا۔

شیخور پورہ میں بھی پولیس نے 20 پی ٹی آئی کارکنوں کو گرفتار کرلیا، حافظ آباد میں بھی چھاپے مارے جارہے ہیں جہاں کونسلر سمیت 3 افراد کو پکڑ لیا گیا، مزید گرفتاریوں کیلئے بھی کارروائی جاری ہیں۔

پولیس نے بھکر میں بھی پاکستان تحریک انصاف کے کارکنوں کی گرفتاری کیلئے کریک ڈاؤن کیا، جہاں 3 کارکن گرفتار کرلئے گئے۔
واضح رہے کہ دو نومبر کو پاکستان تحریک انصاف نے اسلام آباد بند کرنے کا اعلان کر رکھا ہے، ملک بھر سے کارکنان بنی گالہ پہنچ رہے ہیں، عمران خان نے کارکنوں کو ہدایت کی ہے کہ 2 نومبر سے قبل پولیس کے ہاتھ نہ آئیں۔

بشکریہ۔ سما

SHARE

LEAVE A REPLY