نیوزی لینڈ کے جنوبی حصے میں 7.4 شدت کا زلزلہ

0
95

نیوزی لینڈ کے جنوبی حصے میں 7.4 شدت کا زلزلہ ریکارڈ کیا گیا ہے جس کے بعد محکمہ شہری دفاع نے سونامی کی وارننگ جاری کردی ہے۔

فرانسیسی خبر رساں ادارے ‘اے ایف پی’ کی رپورٹ کے مطابق زلزلہ پیما مرکز کا کہنا ہے کہ زلزلے کی شدت 7.4 تھی اور اس کی گہرائی 10 کلومیٹر تھی۔

ادھر امریکی جیولوجیکل سروے کی تازہ رپورٹ کے مطابق زلزلے کے جھٹکے 7.8 شدت کے تھے۔

امریکی ایجنسی کے مطابق زلزلے کا مرکز نیوزی لینڈ کے جزیرے پر قائم شہر کرائسٹ چرچ سے جنوب میں 90 کلومیٹر دور تھا۔

نیوزی لینڈ کی حکومت نے زلزلے کے بعد تسونامی کی وارننگ جاری کردی۔

نیوزی لینڈ کے محکمہ شہری دفاع کا کہنا تھا کہ تسونامی شمالی جزیرے کی مشرقی پٹی سے ٹکرا سکتا ہے، جس سے بچنے کیلئے عوام فوری طور پر محفوظ مقامات کی جانب منتقل ہو جائیں۔

ان کا مزید کہنا تھا کہ تسونامی کی پہلی لہر زیادہ خطرناک نہیں ہوگی تاہم لہریں کئی گھنٹوں تک وقفے وقفے سے آتی رہیں گی۔

ایک مقامی خاتون کا کہنا تھا کہ زلزلے کے چھٹکے بہت طویل دورانیے تک تھے اور اس کے بعد آفٹر شاکس کا سلسلہ بھی جاری ہے۔

واضح رہے کہ پاکستان کی من اور وومن کرکٹ ٹیمیں ان دنوں نیوزی لینڈ میں موجود ہیں جہاں وہ دو ٹیسٹ میچوں کی سیریز میں شرکت کریں گی۔

نیوزی لینڈ میں آنے والے زلزلے کے موقع پر پاکستان کی من کرکٹ ٹیم نیلسن جبکہ وومن کرکٹ ٹیم کرائسٹ چرچ کے ہوٹلوں میں قیام پزیر تھیں۔

کرک انفو کی رپورٹ کے مطابق پاکستان کی من ٹیم کے مینجر وسیم باری نے تصدیق کی ہے کہ نیوزی لینڈ میں آنے والے شدید زلزلے میں پاکستانی کرکٹ ٹیم کے تمام کھلاڑی محفوظ ہیں۔

ان کا کہنا تھا کہ جس وقت زلزلہ آیا کچھ کھلاڑی عبادت، کچھ انگلیڈ اور انڈیا کے درمیان جاری میچ دیکھ رہے تھے۔

انھوں نے بتایا کہ ہوٹل کے اسٹاف نے پاکستانی کھلاڑیوں کو ہوٹل کی چھٹی اور ساتویں منزلوں سے نکلالنے میں مدد فراہم کی۔

بعد ازاں پاکستان وومن کرکٹ ٹیم کی کھلاڑی ثناء میر نے سماجی رابطے کی سائٹ ٹوئٹر پر اپنے ٹوئٹ میں وومن کرکٹ ٹیم کی کھلاڑیوں کی خیریت کی تصدیق کی۔

SHARE

LEAVE A REPLY