سابق نگراں وزیراعظم پاکستان معین قریشی واشنگٹن میں انتقال کرگئے

0
291

سابق نگراں وزیراعظم پاکستان معین قریشی واشنگٹن میں انتقال کرگئے،خاندانی ذرائع کے مطابق وہ پھیپھڑوں کے عارضے میں مبتلا تھے۔

معین الدین احمد قریشی جنہیں معین قریشی کے نام سے جانا جاتا ہے.۔۔ پاکستان کے نگران وزیراعظم تھے ۔ معین قریشی 18 جولائی ، 1993ء سے 19 اکتوبر 1993ء تک پاکستان کے نگراں وزیراعظم رہے۔وہ ورلڈ بنک کے وائس پریزیڈینٹ بھی رہے۔

معین قریشی اس سے قبل امریکا میں مقیم تھے اور پاکستان کی وزارت عظمیٰ کا قلمدان سنبھالنے کے لئے اسی دن سنگاپور سے پاکستان پہنچے تھے۔

معین قریشی 26 جون 1930 کو لاہور میں پیدا ہوئے ۔ ان کے والد محی الدین قریشی برٹش حکومت میں سول سرونٹ تھے۔ معین قریشی نے گورنمنٹ کالج لاہور سے گریجویشن کی اور پھر پنجاب یونیورسٹی سے معاشیات میں ایم اے کیا۔

معین قریشی فل برائٹ اسکالر شپ پر امریکا چلے گئے اور 1955 میں انڈیانا یونیورسٹی سے معاشیات میں پی ایچ ڈی مکمل کی ۔ پی ایچ ڈی مکمل کرنے کے بعد وہ 1955 میں پاکستان واپس آگئے اور پلاننگ ڈویژن میں ملازمت اختیار کی تاہم اگلے ہی سال ملازمت سے استعفا دے کر واپس امریکا چلے گئے اور آئی ایف ایم میں ملازم ہوگئے ۔

وہ 1960 میں گھانا حکومت کے معاشی مشیر مقرر ہوئے ۔ اس کے بعد انہوں نے انٹرنیشنل فنانس کارپوریشن میں شمولیت اختیار کی ۔ جہاں وہ 1974 سے 1977 تک اس کے ایگزیکٹو وائس پریزیڈنٹ بھی رہے ۔

1981 میں انہوں نے عالمی بینک میں شمولیت اختیار کی اور بتدریج اس کے سینئر وائس پریزیڈنٹ آف فنانس مقرر ہوگئے ۔ اس عہدے پر وہ 1987 تک فائز رہے جس کے بعد انہیں عالمی بین کا سینئر واپس پریزیڈنٹ بنادیا گیا ۔

1991 میں انہوں نے ورلڈ بینک کو خیر باد کہہ کر امریکا میں مستقل سکونت اختیار کرلی اور ایمرجنگ مارکیٹ ایسوسی ایٹس نامی کمپنی قائم کی ۔

معین قریشی نے امریکی خاتون سے شادی کی ہوئ تھی جس سے ان کے چار بچے ہیں۔ جن میں دو لڑکے اور دو لڑکیاں شامل ہیں

SHARE

LEAVE A REPLY