سانحہ بلدیہ فیکٹری کے مرکزی ملزم رحمان بھولا کو 19دسمبر تک جسمانی ریمانڈ پر پولیس کے حوالے کردیا۔ایف آئی اے کی ٹیم رحمان بھولا کو گزشتہ روز تھائی لینڈ سے کراچی لائی تھی۔

ملزم رحمان بھولا کو آج کراچی کی انسداد دہشت گردی عدالت میں پیش کیا گیا۔ کیس کی تفتیش کیلئے ایس ایس پی رینک کا افسر مقرر نہ کرنے پر عدالت نے برہمی کا اظہار کیا اور حکم دیا کہ بلدیہ ٹاؤن فیکٹری کیس کی تفتیش کے لیے ایس ایس پی رینک کا افسر مقرر کیا جائے۔

مرکزی ملزم رحمان بھولا کا کہنا تھا کہ مجھ پر لگائے گئےالزامات بے بنیاد ہیں، فیکٹری میں آگ میں نے نہیں اصغر بیگ نے لگائی تھی۔

عدالت نے سانحہ بلدیہ فیکٹری میں ملوث ملزم رحمان بھولا کو19دسمبر تک جسمانی ریمانڈ پر پولیس کے حوالے کردیا۔

سانحہ بلدیہ ٹاؤن فیکٹری کے مرکزی ملزم عبدالرحمان عرف بھولا کو ایف آئی اے کاوئنٹر ٹیر رازم ونگ نے گذشتہ روزنجی ائیر لائن کی پرواز کے ذریعے بنکاک سے کراچی منتقل کیا تھا۔

ذرائع نے بتایا کہ ملزم کی منتقلی سے قبل میڈیکل ٹیسٹ کیا گیا اور میڈیکل ٹیسٹ کی رپورٹ کلیئر آنے پر ملزم کو انٹر پول حکام نے ایف آئی اے کی ٹیم کے حوالے کیا۔

واضح رہے کہ گیارہ ستمبر 2012 کو بلدیہ ٹاؤن کی فیکٹری میں بھتا نہ دینے پر ڈھائی سو سے زیادہ افراد کو زندہ جلاکر موت کی نیند سلادیا گیا تھا

SHARE

LEAVE A REPLY