ٹرینیڈاڈ میں  ویسٹ انڈیز کے خلاف دوسرے ٹی20 میچ میں پاکستانی ٹیم کی بیٹنگ لائن ناکامی سے دوچار ہو کر 132 رنز پر ڈھیر ہو گئی اور ویسٹ انڈیز کو جیت کیلئے 133 رنز کا ہدف دیا ہے۔

ویسٹ انڈیز نے پاکستان کے نقش قدم پر چلتے ہوئے پورٹ آف اسپین میں ٹاس جیت کر پاکستان کو پہلے بیٹنگ کی دعوت دی ہے۔

پاکستان ٹیم اننگز کی ابتدا میں ہی اس وقت مشکلات سے دوچار ہو گئی جب پہلے ہی اوور میں سیمیول بدری کی چار گیندوں پر کوئی بھی رنز بنانے سے محروم رہنے والے کامران اکمل پانچویں گیند پر اپنی وکٹیں محفوظ نہ رکھ سکے۔

بابر اعظم اور احمد شہزاد نے محتاط انداز اپناتے ہوئے دوسری وکٹ کیلئے 41 جوڑے لیکن تیزی سے رنز کرنے کی کوشش میں بابر حریف کپتان کو وکٹ دے بیٹھے۔

احمد شہزاد سے بھی ساتھی کھلاڑی جدائی برداشت نہ ہوئی اوراگلے اوور میں وہ سنیل نارائن کی وکٹ بن گئے۔

فخر زمان بھی اپنے پہلے ٹی20 میں خاص تاثر نہ چھوڑ سکے اور چھکا مارنے کی ناکام کوشش میں باؤنڈری پر کیچ ہوئے۔

اس موقع پر شعیب ملک نے اچھی بیٹنگ کا مظاہرہ کرتے ہوئے سرفرااز کے ساتھ اچھی شراکت قائم کی لیکن 28 رنز بنانے کے بعد ان کی مزاحمت بھی دم توڑ گئی۔

اگلے ہی اوور میں سرفراز بھی پویلین لوٹ گئے جبکہ سہیل تنویر پہلی گیند پر چوکا لگانے کے بعد دوسری ہی گیند پر ایل بی ڈبلیو قرار پائے۔

عماد وسیم بھی مشکل وقت میں ٹیم کے کام نہ آ سکے اور چار رنز بنانے کے بعد حریف کپتان کارلوس برتیھ ویٹ کے عمدہ کیچ کے سبب پویلین لوٹنے پر مجبور ہوئے۔

95 رنز پر آٹھ وکٹیں گرنے کے بعد گرین شرٹس کی سنچری مکمل ہوتی بھی نظر نہیں آ رہی تھی لیکن وہاب ریاض نے 10 گیندوں ہر 24 رنز بنا کر پاکستان کو معقول مجموعے تک رسائی دلائی۔

پاکستان کی پوری ٹیم اننگز کی آخری گیند پر 132 رنز بنا کر پویلین لوٹ گئی۔

ویسٹ انڈیز کی جانب سے نارائن اور بریتھ ویٹ نے تین تین وکٹیں حاصل کیں۔

اس سے قبل پہلے میچ کی فاتح پاکستانی ٹیم نے دوسرے میچ کیلئے ٹیم میں ایک تبدیلی کرتے ہوئے محمد حفیظ کی جگہ فخر زمان کو اٹرنیشنل ڈیبیو کراتے ہوئے ٹیم کا حصہ بنایا۔

دوسری جانب ویسٹ انڈیز نے اپنی ٹیم میں کوئی تبدیلی نہیں کی۔

 چار میچوں کی ٹی ٹوئنٹی سیریز کے دوسرے میچ کے لیے دونوں ٹیمیں ان کھلاڑیوں پر مشتمل ہیں۔

ویسٹ انڈیز: کارلوس بریتھویٹ (کپتان)، ایون لوئس، چیڈوک والٹن، مارلن سیمیولز، لینڈل سمینز، کیرون پولاڈ، رومان پاؤل، جیسن ہولڈر، سنیل نرائن، کیسرک ولیمز اور سیمیول بدری۔

پاکستان: سرفرازاحمد (کپتان)، احمد شہزاد، کامران اکمل، بابراعظم، فخر زمان، شعیب ملک، عماد وسیم، شاداب خان، سہیل تنویر، وہاب ریاض، حسن علی۔

SHARE

LEAVE A REPLY