ابوظہبی ٹیسٹ میں تیسرے دن کھانے کے وقفے پر پاکستان ٹیم نے 2 وکٹوں کے نقصان پر 121رنزبنائے، اظہر علی 5 اور اسد شفیق ایک رن بناکر کریز پرموجود ہیں۔
آؤٹ ہونے والےپاکستانی بیٹسمنوں میں شان مسعود نے 59اور سمیع اسلم نے 51 رنز بنائے، میزبان ٹیم کے بولر پریرا نے سمیع اسلم کی وکٹ حاصل کی جبکہ ہیراتھ نے شان مسعود کو آؤٹ کیا۔
گزشتہ روز کھیل کے دوسرے دن کے اختتام پر پاکستانی ٹیم نے بغیر کسی نقصان کے 64 رنز بنائے تھے، جس میں سمیع اسلم کے 31اور شان مسعود کے 30رنز شامل تھے۔
آج پاکستانی اوپنر بیٹسمین شان مسعود اور سمیع اسلم نے اننگز کو آگے بڑھایا تاہم دونوں بیٹسمین اپنی اپنی نصف سنچری بنانے کے بعد زیادہ دیر نہ ٹھہر سکے اور سمیع اسلم 51 اور شان مسعود 59 رنز پر پویلین لوٹ گئے۔
اس سے قبل کپتان چندی مل کی 155رنز کی ناقابل شکست اننگز کی بدولت سری لنکن ٹیم پہلی اننگز میں 419رنز پر آئوٹ ہوگئی تھی۔
سری لنکن ٹیم کے اوپننگ بیٹسمین کشال سلوا اور کرونارتنے نے 34 رنز کی شراکت قائم کی ۔ سلوا 12 رنز بنانے کے بعد حسن علی کی گیند پر بولڈ ہوگئے جس کے بعد ایک رنز کے اضافے کے بعد نئے آنے والے لہیرو تھرمانے بھی بغیر کوئی رنز بنائے یاسر شاہ کی گیند پر ایل بی ڈبلیو آؤٹ ہوئے۔
تیسرے آؤٹ ہونے والے بیٹسمین مینڈس تھے جو صرف 10 رنز بناسکے،اُنہیں یاسر شاہ نے اپنی گھومتی ہوئی گیند سے شکارکیا۔چوتھی وکٹ پر کرونارتنے اور کپتان دنیش چندیمل نے محتاط انداز اپناتے ہوئے اسکور آگے بڑھایا ۔
سری لنکا کی چوتھی وکٹ 161 رنز پر گری اور کرونارتنے نروس نائنٹیز کا شکار ہوکر 93 رنز پر رن آؤٹ ہوئے۔ سر ی لنکا کے روشن ڈک ویلا اور یدیمتھ کرونارتنے نے بالترتیب 83 اور 93 رنز کی نمایاں اننگز کھیلی ۔
پاکستان کی طرف سےپہلی اننگز میں یاسر شاہ اور محمد عباس نے 3،3 ،حسن علی نے 2 اور حارث سہیل نے ایک لنکن کھلاڑی کو پویلین کی راہ دکھائی تھی۔

SHARE

LEAVE A REPLY