شدت پسند تنظیم ’اسلامک اسٹیٹ‘ یا داعش نے عراقی شہر طارمیہ میں کیے گئے ہلاکت خیز حملے کی ذمے داری قبول کر لی ہے۔ عراقی سکیورٹی فورسز کے ذرائع نے بھی تصدیق کر دی کہ بغداد سے پچیس کلومیٹر شمال کی طرف واقع شہر طارمیہ میں منگل یکم مئی کو کیے گئے اس حملے کی ذمے داری داعش نے تسلیم کر لی ہے۔ اس حملے میں کم از کم آٹھ عام شہری مارے گئے تھے۔ داعش نے دعویٰ کیا ہے کہ اس خونریز کارروائی میں بائیس افراد ہلاک ہوئے، جو بغداد حکومت کی حامی سنی مسلم قبائلی ملیشیا کے ارکان تھے۔

SHARE

LEAVE A REPLY