نوازشریف، مریم نواز کےجیل ٹرائل کا حکم

0
75

سابق وزیر اعظم نواز شریف اور اُن کی صاحبزادی مریم نواز کو اڈیالہ جیل منتقل کردیا گیا، جہاں اُنہیں بی کلاس دے دی گئی۔

نواز شریف اور مریم نواز کا میڈیکل چیک اپ مکمل ہوگیا ہے اور میڈیکل ٹیم نے دونوں کو صحت مند قرار دے دیا ہے۔

جیل مینول کےمطابق بی کلاس میں ٹیلی وژن، اخبار اور بیڈ کی سہولت دی جاتی ہے جبکہ اٹیچ باتھ روم، پنکھا اور ایک مشقتی بھی دیاجاتاہے۔

نواز شریف، مریم نواز اور دیگر کے خلاف دو ریفرنسز کی سماعت اڈیالہ جیل میں کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔

وزارت قانون نے ملزمان کے جیل ٹرائل کا حکم دیتے ہوئےنوٹیفکیشن جاری کردیا ہے۔

وزارت قانون کی جانب سے جاری نوٹیفکیشن کے مطابق احتساب عدالت کی آئندہ کارروائی اڈیالہ جیل میں ہوگی۔

نوٹی فکیشن میں کہا گیا ہے کہ نواز شریف اوردیگر کیخلاف 2 ریفرنسز کی سماعت جیل میں ہوگی، ان ریفرنسز میں العزیزیہ اسٹیل ملزاورفلیگ شپ انوسٹمنٹ ریفرنس شامل ہیں۔

اڈیالہ جیل میں ٹرائل کاحکم قومی احتساب آرڈیننس کی شق16 کے تحت دیا گیا ہے۔

سابق وزیر اعظم میاں محمد نواز شریف اور ان کی صاحبزادی مریم نواز کو گرفتار کرکے اڈیالا جیل پہنچا دیا گیا ہے، جیل مینوئل کے تحت جیل اسپتال میں طبی معائنے کے بعد مریم نواز کو سہالہ ریسٹ ہاؤس منتقل کئے جانے کا امکان تھا اور سہالہ ریسٹ ہاؤس کو سب جیل کا درجہ دے دیا گیا تھا۔

تاہم ذرائع کا کہنا ہے کہ ایک مرتبہ پھر پلان میں تبدیلی کی گئی ہے اور نوازشریف اور مریم نواز کو اڈیالہ جیل میں ہی رکھنےکا فیصلہ کیا گیا ہے جبکہ پولیس اور انتظامیہ کے افسران کو فیصلے سے آگاہ کردیا گیا ہے۔

احتساب عدالت کے جج رات گئے فیڈرل جوڈیشل کمپلیکس پہنچے اور نیب کی درخواست پر نواز شریف اور مریم نواز کو جیل بھیجنے کے احکامات جاری کیے۔

SHARE

LEAVE A REPLY