وزیرِاعظم نے شبلی فراز کو سینیٹ میں قائدِ ایوان مقرر کردیا

0
61

نومنتخب وزیرِاعظم اور پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کے چیئرمین عمران خان نے سینیٹر شبلی فراز کو نیا قائدِ ایوان مقرر کردیا۔

وزارتِ پارلیمانی امور کی جانب سے سینیٹ سیکریٹریٹ کو 24 اگست کو ارسال کیے جانے والے خط میں کہا گیا ہے کہ سینیٹر شبلی فراز ایوانِ بالا میں حکومت کی نمائندگی کریں گے۔

خط میں کہا گیا کہ رولز آف پروسیجر اینڈ کنڈکٹ آف بزنسز برائے سینیٹ 2012 کے رول 2(1) کے مطابق قائدِ ایوان کو وزیراعظم منتخب کریں گے جو سینیٹ میں حکومتی نمائندہ ہوگا، اور وہی وزیرِاعظم کی غیر موجودگی میں ایوانِ بالا کے امور کا ذمہ دار ہوگا۔

خیال رہے کہ شبلی فراز 2015 میں پاکستان تحریک انصاف کے ٹکٹ پر خیبرپختونخوا سے سینیٹر منتخب ہوئے تھے۔

شبلی فراز ایوان بالا میں قائمہ کمیٹی برائے ٹیکسٹائل اور تجارت اور قائمہ کمیٹی برائے گردشی قرضہ کے چیئرمین کے طور پر اپنی ذمہ داریاں نبھا چکے ہیں۔

شبلی فراز پاکستان کے معروف شاعر فراز احمد فراز کے صاحبزادے ہیں۔

واضح رہے کہ پاکستان مسلم لیگ (ن) کی جانب سے چیئرمین سینیٹ صادق سنجرانی کو خط لکھا گیا تھا جس میں ان سے ایوان میں اپوزیشن لیڈر کے لیے پاکستان پیپلز پارٹی (پی پی پی) کی شیری رحمٰن کی جگہ راجہ ظفرالحق کو مقرر کرنے کی درخواست کی گئی تھی۔

تاہم مسلم لیگ (ن) کی جانب سے لکھے گئے خط پر ابھی تک کوئی فیصلہ نہیں کیا گیا۔

سابق حکمران جماعت کی جانب سے لکھی گئی درخواست پر اس کی اتحادی جماعتوں جمعیت علمائے اسلام (ف) اور نیشنل پارٹی (این پی) کے اراکین کے دستخط بھی موجود ہیں

SHARE

LEAVE A REPLY