یمن میں جاری خانہ جنگی کو تقریبا چار برس مکمل ہونے والے ہیں اور اب اقوام متحدہ کی ثالثی میں نئے امن مذاکرات کا آغاز ہو رہا ہے۔ سویڈن میں ہونے والے ان مذاکرات میں حکومتی اور حوثی باغیوں کے نمائندے شریک ہیں۔ چار برس سے جاری خانہ جنگی کے دوران دس ہزار سے زائد افراد ہلاک ہو چکے ہیں

اقوام متحدہ کے مطابق اس وقت یمن کو دنیا کے بدترین انسانی المیے کا سامنا ہے۔ اس ملک میں صدر منصور ہادی کو سعودی عرب جب کہ ان کے خلاف لڑنے والے حوثی باغیوں کو ایران کی حمایت حاصل ہے۔

SHARE

LEAVE A REPLY