مچھر کے کاٹنے سے پھیلنے والی بیماریوں میں سے ایک اور چکن گونیا وائرس کراچی پر حملہ آور ہوئی ہے،جس نے ملیر والوں کو جکڑلیا ہے۔

مادہ مچھر سے پھیلنے والے اس وائرس کی علامات ڈینگی بخار سے ملتی جلتی ہیں اور اکثر اسے ڈینگی ہی سمجھتے ہیں۔

ماہرین صحت کے مطابق چکن گونیا وائرس انفیکشن کا شکار مچھر کے کاٹنے سے انسان میں منتقل ہوتا ہے اور اس میں مریض کو تیز بخار اور جسم اور جوڑوں میں شدید درد ہوتا ہے،بعض اوقات مریض کو شدید سر درد، تھکن اور خراب ہاضمے کی شکایت بھی ہوتی ہے۔

ورلڈ ہیلتھ آرگنائزیشن کے مطابق چکن گونیا وائرس کی اب تک کوئی کمرشل ویکسین نہیں بنی اور نہ ہی اس مرض کے لیے کوئی خاص اینٹی بائیوٹک دستیاب ہے۔

چکن گونیا سے بچاؤ کے لیے بھی مچھروں کی افزائش روکنا اور مچھر دور بھگانے والی چیزوں کا استعمال ضروری ہے

SHARE

LEAVE A REPLY