سابق وزیراعظم نوازشریف کا کہنا ہے کہ پاکستان میں دھاندلی کی نئی تاریخ رقم کی جارہی ہے، دھاندلی نہ روکی گئی تو نتائج ہولناک ہوں گے۔

لندن کی ہارلے اسٹریٹ کلینک کے باہر میڈیا گفتگو کرتے ہوئے سابق وزیراعظم نواز شریف نے کہا کہ ایک جیسے مقدمات میں دوسروں کے فیصلے کچھ اور ہمارے کچھ اور آتے ہیںجبکہ پچھلے کئی مہینوں کا ریکارڈ اٹھا کر دیکھ لیںتو صرف میں اورمیرے ساتھی نشانہ بنے ہیں۔

ان کا کہنا تھا کہ 25 جولائی کو جو ہوگا وہ نوشتہ دیوار ہے، پوری پارٹی کو ہدایت کی ہے کہ قمرالاسلام کی بیٹی اور بیٹے کے کندھے سے کندھا ملا کر چلیں۔

نواز شریف نےمزید کہا کہ نیب، ریٹرننگ افسران اور دیگر نے یہ کیا سلسلہ شروع کر رکھا ہے، بہت خطرناک کھیل کھیلا جارہا ہے، الیکشن سے پہلے دھاندلی کا سلسلہ شروع کردیا گیا اور قمرالاسلام کی گرفتاری انتخابات سے قبل دھاندلی کا ثبوت ہے۔

انہوں نے کہا کہ کبھی دانیال عزیز کو تو کبھی شاہد خاقان عباسی کو نااہل قرار دیا جاتا ہےجبکہ دونوں کی نااہلی پربہت افسوس ہوا۔

مسلم لیگ ن کے قائد نے کہا کہ اس وقت ایسی ذہنی کیفیت ہے کہ سیاسی امور پر بات کرنے سے گریز کر رہا ہوں، اس وقت میری ساری توجہ اپنی بیوی کی صحت پر ہے لیکن میں اپنے آپ کو قومی فرض سے بھی دورنہیں رکھ سکتاہوں۔

SHARE

LEAVE A REPLY