سندھ ہائیکورٹ نے پرائیویٹ اسکولوں کی طرف سے فیس میں سالانہ 5 فیصد سے زائد اضافے کو غیر قانونی قرار دیدیا۔

جسٹس محمدعلی مظہر ،جسٹس اشرف اور جسٹس عقیل احمدعباسی پر مشتمل 3 رکنی لارجر بینچ نے 6 جون کو اسکول فیس میں اضافے سے متعلق کیس کا فیصلہ محفوظ کیا تھا جو آج سنا دیا گیا ۔

فیصلے کے مطابق نجی ا سکول فیس میں سالانہ 5 فیصد سے زائد اضافہ غیر قانونی ہوگااور پرائیویٹ اسکول 5 فیصدسے زائد فیس بڑھانے کے اہل نہیں ہیں۔

عدالتی حکم کے بعد پرائیویٹ ا سکولوںکی فیس میں پانچ فیصدسے زائد وصولی کو روک دیا گیا ہے۔

SHARE

LEAVE A REPLY