لندن میں پارلیمنٹ کے قریب حملے کے بعد عوامی اتحاد کا مظاہرہ کیا گیا ،مسلمان اور دیگر مذاہب سے تعلق رکھنے والے ہزاروں شہری ٹریفلیگر اسکوائر پر جمع ہوئے۔

شہریوں نے حملے میں مرنے والوں کو خراج عقیدت پیش کیا ،اس موقع پر لندن کے میئر صادق خان نے کہا کہ معاشرے کوتقسیم کرنےوالے افرادکوبرداشت نہیں کیاجائےگا۔

برطانوی میڈیا کے مطابق خالد مسعود برطانوی پارلیمنٹ کی جانب بڑھا تو اس کا ہدف وزیراعظم اور اراکین اسمبلی تھے

اس موقع پر لندن کے میئر صادق خان نے کہا کہ لندن کے باسی دہشت گردی کی ایسی کارروائیوں سے خوفزدہ نہیں ہوں گے۔ بدھ کے دن برطانوی پارلیمان کے نزدیک ہونے والے حملے میں چار افراد ہلاک ہو گئے تھے۔

پولیس نے تصدیق کر دی ہے کہ یہ کارروائی باون سالہ خالد مسعود نے اکیلے ہی سر انجام دی تھی۔ انتہا پسند گروہ داعش نے اس خونریز حملے کی ذمہ داری قبول کی ہے۔ تاہم برطانوی خفیہ اداروں نے ابھی تک اس داعش کے اس دعوے کی تصدیق نہیں کی ہے۔

SHARE

LEAVE A REPLY