پیپلزپارٹی کے رکن سندھ اسمبلی شرجیل میمن نے کہا ہے کہ نیب کا دوغلا معیار کیوں ہے؟ شریف خاندان اور اسحاق ڈار کے خلاف نیب ریفرنسز ہیں لیکن وہ پوری دنیا میں گھوم رہے ہیں۔
سندھ اسمبلی کے اجلاس میں تقریر کرتے ہوئے پیپلزپارٹی کے رہنما شرجیل انعام میمن پھٹ پڑے ان کا کہنا تھا کہ مجھے ضمانت کے کاغذات موجودہونے کے باوجود حراست میں لےلیا گیا۔
ان کا کہنا تھا کہ کیپٹن صفدر کے وقت انہی نیب اہلکاروں کو ایئرپورٹ میں داخل نہیں ہونےدیا گیا۔
شرجیل میمن نے چیئرمین نیب سے ای سی ایل کےطریقہ کار کا جائزہ لینے کی درخواست بھی کردی۔
اجلاس کےموقع پر سندھ اسمبلی میں شرجیل میمن کی گرفتاری کے خلاف قرارداد بھی پیش گئی ۔
اس سے قبل سندھ اسمبلی کے اجلاس میں شرکت کے لیے کرپشن کے الزام میں گرفتار پیپلز پارٹی کے رہنما شرجیل میمن کو بکتربند گاڑی میں جیل سے اسمبلی لایا گیا۔سندھ اسمبلی پہنچنے پر شرجیل میمن پر پھولوں کی پتیاں نچھاورکی گئی ۔

SHARE

LEAVE A REPLY