داتاصاحب کے عرس کی تقریبات کا آغاز

0
182

داتا کی نگری کے داتا علی بن عثمان ہجویری المعروف داتاصاحب کے 974 ویں عرس کی تقریبات آج سے شروع ہوں گی ۔
علی بن عثمان ہجویری گیارہویں صدی میں افغانستان سے لاہور آئے اور دریائے راوی کے ٹیلے پر ڈیرہ لگایا ہندو مت کے تعصب اور نفرت کے ستائے ہوئے لوگوں کو اپنی تعلیم اور اخلاق سے گرویدہ کیا اور بہت جلد چھا گئے۔
داتا صاحب کے عرس کی تقریبات کا آغاز رسم چادر پوشی اور لاہور کی گوجر برادری کی جانب سے لگائی جانے والی دودھ کی سبیل سے ہوتا ہے۔
داتا صاحب کو اہل لاہور کے دل مسخر کرنے اور انہیں نور اسلام سے منور کرنے کا اعزاز حاصل ہے۔ ان کی بلند پایہ تصنیف کشف المحجوب کو تصوف کی رہنما کہا جاتا ہے۔ ان کا کہنا ہے کہ دل کی صفائی اور عمل کی بھٹی سے گزرنا عالم اور صوفی کے لئے ضروری ہے۔
تین روزہ تقریبات میں محفل حسن قرات، نعت علمی محافل شامل ہیں جن میں عقیدت مند نذرانہ عقیدت پیش کرتے ہیں۔
تین روزہ عرس میں زائرین کی دھمالیں، لنگر کا خصوصی انتظام اور غیر معمولی سیکورٹی انتظامات شامل ہیں۔ لاہور داتا کی نگری کے حوالے سے پہچانا جاتا ہے اہلیان لاہور فیض کے اس سرچشمے سے ہمیشہ رہنمائی اور روشنی پاتے رہیں گے۔

SHARE

LEAVE A REPLY