تحریک انصاف کی منحرف رکن قومی اسمبلی عائشہ گلالئی نے اپنی جماعت بنانے کا اعلان کردیا ہے اور کہا ہے کہ پی ٹی آئی کے نظریاتی وبانی اراکین ایک پلیٹ فارم پر الیکشن میں حصہ لیں گے ۔

نوشہرہ پریس کلب میں میڈیا سے گفتگو میں عائشہ گلالئی نے کہا کہ تحریک انصاف ( عائشہ گلالئی ) کے نام سے نئی سیاسی جماعت بنانے کا باقاعدہ اعلان 2018ءکے پہلے ہفتے میں کیا جائےگا۔

ان کا مزید کہناتھاکہ پی ٹی آئی کے تمام نظریاتی اور بانی اراکین اسمبلی اور کارکن ایک پلیٹ فارم پر متحد ہوں گے اور 2018ء کے الیکشن میں بھرپور حصہ لیں گے ۔

عائشہ گلالئی نے یہ بھی کہا کہ عمران نیازی تمام سیاسی جماعتوں سے لٹیروں چوروں اور مسترد لوگو ں کو پارٹی میں لارہے ہیں اور دعویٰ کررہے ہیں کہ ان چوروں لٹیروں سے تبدیلی لائیں گے،پی ٹی آئی چیئرمین کو غریب اور مڈل کلاس عوام سے کچھ لینا دینا نہیں۔

انہوں نے کہا کہ موجودہ آرمی چیف نے ہمیشہ جمہوریت کا ساتھ دیا اور سینیٹ میں آ کرآرمی چیف نے سب کو اہم میسج دیا ہے۔

عائشہ گلالئی نے کہا انتخابات وقت پر ہونے چاہیےصوبائی اسمبلیاں توڑے کے بارے میں وزراء اعلیٰ خود بتاسکتے ہیں، اس پورے بحران میں عوام بھی برابر کے شریک ہے، جنہوں نے ان حکمرانوں کو منتخب کیا۔

انہوں نے کہا کہ سیاستدانوں کے تمام جلسے میوزیکل کنسلنٹ بن چکے سیاستدان خواد گاتے بھی ہے اور ناچتے بھی ہے، ان سیاستدانوں نے فلم انڈسٹری کا کا م اپنے ذمہ لے لیا اور ان کا حق مار رہے ہیں ۔

عائشہ گلالئی نے عمران خان پر لگائیں گے الزمات کے حوالے سے کہا کہ میں نے جو آواز اٹھائی اس پر امریکہ برطانیہ سمیت پوری دنیا میں پزیر ائی ملی۔

انہوں نے سپریم کورٹ کے فیصلے پر تحفظا ت کا اظہار کیا اور کہا کہ سپریم کورٹ کا احترام کرتی ہوں، لیکن عمران خان کے فیصلے پر احتلاف ہے عمران خان نہ صادق ہے نہ امین، اس کے خلاف بیرون ملک فنڈنگ کا الزام بھی ہے اور اس کے فیصلے میں کئی تکنیکی نکات ہے اس لیے یہ فیصلہ صحیح نہیں ہے۔

SHARE

LEAVE A REPLY