بھارتی سپریم کورٹ نےہم جنس پرستی کےقانون کے سیکشن 377 پر نظرثانی کرنے کا اعلان کردیا۔

بھارتی میڈیاکےمطابق سپریم کورٹ میں ہم جنس پرستوںنے پٹیشن دائرکی،اور اس میں موقف اختیار کیا گیا کہ جنسی ترجیحات کی وجہ سے انکی زندگی پولیس کے خوف میں گزررہی ہے۔

جس پر سپریم کورٹ نے ہم جنس پرستی کےقانون کے سیکشن 377 کےدوبارہ جائزہ لینےکااعلان کرتےہوئےمرکزکوپٹیشن پرردعمل کیلئےنوٹس جاری کردیا،سیکشن 377کےتحت 2013میں سپریم کورٹ نےہم جنس پرستی کوجرم قراردیاتھا۔

SHARE

LEAVE A REPLY