انڈے امراض قلب اور ذیابیطس سے بچاؤ کے لیے مفید

0
612

انڈے کھانا پسند کرتے ہیں ؟ تو اچھی خبر یہ ہے کہ انہیں کھانا امراض قلب اور ذیابیطس سے تحفظ جبکہ جسم میں صحت کے لیے ‘اچھے کولیسٹرول’ کی مقدار بڑھاتا ہے۔

یہ بات برطانیہ میں ہونے والی ایک طبی تحقیق میں سامنے آئی۔

رائل سوسائٹی آف میڈیسین فوڈ اینڈ ہیلتھ کی تحقیق کے مطابق انڈے پروٹین سمیت نو ضروری ایمنو ایسڈز اور تیرہ وٹامنز و منرلز سے بھرپور ہوتے ہیں جبکہ ان میں موجود وٹامن ڈی جسمانی دفاعی نظام سمیت ہڈیوں کی صحت بہتر بناتا ہے۔

اس سے قبل یہ بات ثابت ہوچکی ہے کہ جسم میں وٹامن ڈی کی کمی امراض قلب اور کینسر جیسے جان لیوا امراض کا باعث بنتی ہے۔

اسی طرح انڈوں کولائن نامی جز بھی ہوتا ہے جو کہ یاداشت سے محرومی سے تحفظ دینے میں مددگار ثابت ہوتا ہے جبکہ اس میں موجود اینٹی آکسائیڈنٹس عمر کے ساتھ پٹھوں میں آنے والی تنزلی سے بچاتے ہیں۔

تحقیق میں بتایا گیا کہ انڈے غذائی کولیسٹرول کے حصول کا اہم ذریعہ ہیں جو کہ جسم کے لیے فائدہ مند ہوتا ہے جس سے خون کی شریانوں کے امراض سے تحفظ ملتا ہے جو امراض قلب کے خطرے سے بچنے کے لیے ضروری ہے۔

محققین کا یہ بھی دعویٰ تھا کہ انڈوں کو ہفتے میں چار بار کھانا ذیابیطس کا خطرہ بھی 40 فیصد تک کم کرتا ہے۔

ان کے بقول اس کی وجہ اس میں موجود غذائی اجزاءہوتے ہیں جو میٹابولزم کو بہتر بنانے میں مددگار ثابت ہوتے ہیں۔

تاہم یہ بات مدنظر رکھنی چاہیے کہ انڈوں کا استعمال اعتدال پسندی سے کیا جائے اور یہ بات انتہائی اہم ہے کہ انڈوں کو کس طرح بنایا جارہا ہے اور کس چیز کے ساتھ کھایا جارہا ہے (پراٹھے کھانے سے بچیں)۔

اگر آپ کا کالیسٹرول بڑھا ہوا رہتا ہے تو پھر اس کا استعمال زردی کے بغیر کریں

SHARE

LEAVE A REPLY