آج فیصلے کا دن ہے. نتیجہ بتائے گا کہ عوام نے عقلمندی سے فیصلہ کیا یا ہوا کا رخ دیکھ کر. معمولی فائدے کے لئے ووٹ دیا یا اپنے مستقبل کے لئے سیاسی ڈرامے بازوں کو چنا یا مخلص بے غرض قیادت کو.

زرقا مفتی۔۔۔لاہور

…………………
ووٹر کے لیئے تعلیم ضروری قرار دی جانی چاہیئے
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
ہماری زیادہ آبادی دیہاتوں میں رہتی ہے اور ایک ہی گھر کے بارہ بارہ افراد اپنے وڈیروں کے حکم پر ووٹ دیتے ہیں ۔ حتیٰ کہ جو شہروں میں نوکری کرنے کے لیئے آتے ہیں وہ خاص طور پر اپنے وڈیروں کا حکم بجا لانے کی خاطر ووٹ دینے اپنے آبائی گاوْں جاتے ہیں ۔۔ اور یہ سب تعلیم سے دوری کے باعث ہے ۔ میری اپنی کام والیاں کہتی ہیں باجی ! پنڈ جانا اے ووٹ دینا اے ۔۔۔ پوچھا کس کو ووٹ دینا ہے کہا باجی ساڈی کاہدی مرضی اے اساں تے جنہوں وڈیرے آکھن گے اوسے نوں ٹھپہ لا دیاں گے ۔ شہناز پر و ین سحر ۔۔ لاہور
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
الیکشن کے حوالے سے
غلام زہنوں کی نیت بدلنے والی ہے
ہر ایک اب تو روائیت بدلنے والی ہےامیر شہر بھی محبوس ہونے والا ہے
غریب شہر کی قسمت بدلنے والی ہےاترنے والے ہیں اب سانپ آستینوں سے
حقیقی معنوں میں بیعت بدلنے والی ہےہوا کے شور میں جلنا ہے ان چراغوں کو
شب سیاہ کی صورت بدلنے والی ہےاڑائے پھرتی تھی جو خاک پھول بانٹے گی
ہوائے شہر کی عادت بدلنے والی ہے
عرفان صادق
…………………………
VOTE FOR PAKISTAN
Today is the day to realize YOUR power. Today is the day to realize YOU matter and your opinion matters. Have a voice to contribute to the positive history of Pakistan, VOTE.
Make an informed decision for the better, brighter, and beautiful Pakistan. All the women, men, youngsters, and elderly come out to vote. It’s your turn to make an impact. Every vote counts.

……………………

Today, first time in my life I am going to use my power of vote, keeing in my mind how important my vote is for buliding a better nation. Vote people and vote for better Pakistan.
Hamza Abbasi Karachi
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
“Today is a decisive day and I am really very happy that people of pakistan are encouraging the change in the country. My prayers are with my home country Pakistan and we should all vote for the change”

Naveed Akhtar
Adelaide-Australia.
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
آج کی صبح خدا کرے کہ صبح نو بن کر آے وہ صبح نو جو میرےوطن کو نیا وقار،عزت، شان و شوکت اورآن بان دے
خوش قسمتی بار بار دروازے پر دستک نہیں دیتی قوم کی تقدیر بدلنے کا موقع اور اختیار آپ کے ہاتھوں میں ہے اسے ضائع مت کیجئے ووٹ دیں پاکستان کے مفاد کو ترجیح دیتے ہوئے صوبائیت، لسانیات، برادری کو پس پشت ڈال کر صرف اور صرف پاکستان کا سوچیں ایک طرف وہ لوگ ہیں جنہوں نے قومی خزانے کو لوٹا ہے دہشت گردی کی پشت پناہی کی جمہوریت کو مذاق بنا کر رکھ دیا دشمن کا ساتھی بنارہا اپوزیشن نوراکشتی کھیلتی رہی
میڈیا ہاوس نان ایشوز پر بات کرتے رہے مذہب کے ٹھیکیدار بھی مصلحت اورمفاد پرستی کا روزہ رکھ کر چپ بیٹھے رہے اور رنگیلا کھل کھیلتارہا کروڑوں کی آبادی میں انہیں کوئی وزیر خارجہ نہ مل سکا
ایسے میں ایک ہی سرپھرا شخص تھا جو انصاف انصاف پکارتا رہا آج فیصلے کی گھڑی ہے خود حالیہ تاریخ، حکومت، پارلیمنٹ، سینٹ، مذہبی ٹھیکیدار وں، لفافہ بردار صحافیوں کو اور ان کے کردار کو پیش نظر رکھ کر پاکستان کے وسیع تر مفاد میں ووٹ دیں

افراد کے ہاتھوں میں ہے اقوام کی تقدیر

ہر شخص ہے ملت کے مقدر کا ستارہ

نصرت نسیم۔ پشاور

…………………….

Musarrat Bano

This is going to be a happen first time in my life to cast vote freely….No pressure of any political party, no harassment no threats…Now this is our responsibility being citizen to choose right candidate for bright future of Pakistan.
I think it time to pay back to our country to save democracy and integrity…Please tomorrow 25th July cast your vote
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
Zeeshan Abdul

وطن عزیز اس وقت بے شمار مسائل کا شکار ہے اور یہ الیکشن طے کریں گے کہ ہم نے ملک کو کس طرف لے کر جانا ہے۔ یہ الیکشن ملک کی تاریخ کے سب سے دلچسپ نظر آ رہے ہیں۔ پچیس جولائی کو اس انسان کو ووٹ دیں جو واقعی ہمارے مسائل حل کر سکتا ہے۔ اگر آپ ووٹ نہیں دیں گے تو کل کو آپ شکایت کرنے کے حقدار بھی نہیں۔ لہذا اپنا حقِ رائے دیہی ضرور استعمال کریں اور اس ملک کو اندھیروں سے نکالنے میں مدد کریں۔
ذیشان عبدل گوندل – سڈنی
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

ڈاکٹر عافیہ ، حکیم سعید ،تین سو آدمی حیدرآباد کی فیکٹری میں زندہ جلا دئیے گئے .مظفر گڑھ میں ، قصور میں عزتوں کے جانے نکال دئیے گئے ، ایٹم بمب بنانے والے ڈاکٹر قدیر ، دو جواب بھائیوں کو سیالکوٹ میں ڈنڈوں سے مار کر الٹا لٹکایا دیا گیا ، ایمل کانسی ، ریمنڈ ڈیوس ، کرنل جوزف ، اور پشاور میں سکول کے ایک سو سینتیس بچوں کا بہیمانہ قتل پاک آرمی کے جوانوں کی شہادتیں … اپو جی یہ سب کیا ہوا پاکستان کی ہسٹری خون سات لت پت ہے . ہیرے رول دئیے گئے اگر اب بھی اوم نے ہوش کے ناخن نہ لیے تو پھر اتنا کہوں گا کہ خدا ہمیں کبھی معاف نہیں کرے گا ک جس قوم کو اپنا اور اپنے بچوں کا مستقبل عزیز نہیں …………. الله پاک پاکستان کی حفاظت فرماۓ ….. آمین۔۔افتخار خان پاکستان
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
“الیکشن سے پہلے آخری پوسٹ”

یہ کرپشن کے خلاف جنگ نہیں ہے۔ یہ انصاف اور احتساب کے نام پر ادارہ جاتی بالادستی کی جنگ ہے۔ اور یہ کوئی پہلی مثال نہیں ہے۔ یہ احتساب پون صدی سے چلا آرہا ہے۔ اس احتساب نے پاکستان کی تقدیرمیں ایک ستارے کا اضافے نہیں کیا۔ البتہ جو مقاصد جنہوں نے اپنے لیے طے کیے تھے، خوش نیت عوام کے ذریعے وہ مقاصد حاصل کرلیے گئے۔ آج کی یہ جنگ بھی آپ کی نہیں ہے، جنگ کا میدان آپ کا نہیں ہے، اس جنگ میں شرائط آپ کی نہیں ہیں۔ جب یہ میدان اور ڈیزائن آپ کا نہیں تو آپ کو وہ نتائج کیونکر مل سکتے ہیں جو آپ نے بہت خلوص سے سوچ رکھے ہیں۔

پھر یہ انتخابات سیاسی جماعتوں کے بیچ ہو بھی نہیں رہے۔ یہ انتخابات اداروں کے بیچ ہورہے ہیں۔ فرحت اللہ بابر اور رضاربانی کی زبان میں یوں کہیے کہ یہ الیکشن نہیں بلکہ ریفرنڈم ہونے جارہا ہے۔ جب جنگ اور اس کے فریق اتنے واضح ہوں تو پھر یہ بھی واضح ہوجاتا ہے کہ کس بنیاد پر کس کی ہمنوائی کرنی ہے۔

چنانچہ آج کے حوالے سے جو بات دو عشروں بعد ہم نے اپنی نسل کو بتانی ہے، وہ بات آج ہی ہم خود کیوں نہیں سمجھ لیتے۔ واضح صف بندی بھی اگر یہ بات نہ سمجھا سکی تو پھر کس امید پہ کہیے کہ آرزو کیا ہے۔

بس کچھ سوالات سامنے رکھنے ہیں اور ووٹ دینے جانا ہے۔

۱۔ آپ ادارہ جاتی مفاد کو قومی مفاد سمجھ کر ہنگامی حالات والی پالیسیاں تشکیل دیتے رہنا چاہتے ہیں یا پھر تمام طبقات کی خواہش پر مبنی قومی مفاد ترتیب دے کر پرامن حالات کی پالیسیاں تشکیل دینا چاہتے ہیں۔

۲۔ آپ پڑوسی ممالک کے ساتھ پرامن تعلقات قائم کرنا چاہتے ہیں یا پھر ان کے ساتھ مسلسل حالتِ جنگ میں رہنا چاہتے ہیں۔

۳۔ آپ خارجہ پالیسی کو سفارتی، سیاسی، معاشی اور اقتصادی بنیادوں پر تشکیل دینا چاہتے ہیں یا اسے من گھڑت احادیث پر استوار کرنا چاہتے ہیں۔

۴۔ آپ ملک اور اسلام کو مسلسل تاریخ کے نازک ترین موڑ سے گزرتے دیکھنا چاہتے ہیں یا پھر انہیں کسی شجرِ سایہ دار کے نیچے سستانے کا موقع بھی دینا چاہتے ہیں۔

۵۔ آپ ریاست کو سیکیورٹی اسٹیٹ رکھنا چاہتے ہیں یا فلاحی مملکت والے خواب کی کبھی تعبیر بھی چاہتے ہیں۔

۶۔ آپ اقلیتوں کو اپنے ہی جیسا پاکستانی سمجھ کر انہیں احساسِ ملکیت دینا چاہتے ہیں یا پھر ان کے عقیدوں کا ان کا قصور مان کر اجنبیت کا احساس اجاگر کرنا چاہتے ہیں۔

۷۔ آپ اٹھارہویں ترمیم کے جانبداروں کے ساتھ رہ کر اپنے وسائل کا اکثر حصہ تعلیم اور صحت پر لگانا چاہتے ہیں یا پھر وسائل کا اکثر حصہ توپ خانے میں جھونک دینا چاہتے ہیں۔

۸۔ آپ صوبوں کو ان کا جائز حق دینا چاہتے ہیں یا نظریہ پاکستان کی بنیاد پر ان کے حقوق کے نعروں کو نسل پرستانہ نعرے قرار دے کر حق مارنا چاہتے ہیں۔

۹۔ آپ اقتدار میں براہ راست شراکت چاہتے ہیں یا خود کو چند ایسے عقل مندوں کے حوالے کرنا چاہتے ہیں جو اپنی ذہانت کی گواہی خود دیتے ہیں۔

۱۰۔ اس نسل کو ریاست کی پروردہ کالعدم تنظیموں، مذہبی انتہاپسندوں اور فتوی ساز فیکٹریوں کے حوالے کرنا چاہتے ہیں یا پھر کچھ ایسے فیصلے کرنا چاہتے ہیں کہ آس پڑوس کے لوگ اور دنیا کا اجتماعی شعور آپ کے ساتھ بیٹھنا پسند کرے۔

۱۱۔ آپ اسی کو اسٹیٹس کو سمجھتے رہنا چاہتے ہیں جسے جوتا مار کر بھی آپ میٹھی نیند سو پاتے ہیں، یا پھر اُس اصل اسٹیٹس کو کی شناخت چاہتے ہیں جس پر رائے دینے کے بعد آپ کے دوست احباب اور اہل خانہ آپ کے لیے فکر مند ہو جاتے ہیں۔

۱۲۔ توہین اسلام، توہین عدالت، احتساب اور انصاف جیسے نعروں میں لپٹے ہوئے انتقامی حربوں میں تبدیلی کی رمق ڈھونڈنا چاہتے ہیں یا پھر بغیرمیلنگ کے اپنا فیصلہ آپ کرنا چاہتے ہیں۔

۱۳۔ ساری زندگی ایسی مہم جوئیوں کا حصہ رہنا چاہتے ہیں جن پر دس پندرہ سال بعد افسوس ہو، یا پہلی بار کوئی ایسا فیصلہ کرنا چاہتے ہیں جو آج تو ناپسندیدہ لگے مگر دس پندرہ برس بعد آپ سینہ چوڑا کرکے اپنی نسل کو بتاسکیں کہ ہم تاریخ کی درست سمت میں کھڑے تھے؟

یہ سوچیے، جائیے اور ووٹ کیجیے۔

راج رہے بس خلق خدا کا!
.
فرنود عالم
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
پیارے پاکستانی بہنو اور بھائیو، بچو اور بچیو! پاکستان کی کشتی اس وقت سخت ہچکولے کھا رہی ہے۔ ہر طرف بحری قزّاق اور سرکش لہریں ہیں۔ اسکےاندر بھی اس میں سوراخ کرنے والے موجود ہیں۔ اس کڑے وقت میں اس کے کشتی ران کا انتخاب پوری ایمانداری اور ذمہ داری سے کریں تاکہ یہ کشتی منجھدھار سے نکل کر پرسکون سفر پر کامیابی کی منزل کی طرف گامزن ہو سکے۔آمین
خدا کے لیے، اپنے لیے اور اپنے بچوں کے مستقبل کے لیے اس وقت صرف پاکستانی بن کر سوچیں۔ آپ کا ووٹ پاکستان کی امانت ہے ا سکو صرف کسی اہل کو دیں علاقائی لسانی اور عقائد کی فصیلوں اوررکاوٹوں کو عبور کریں پاکستان کو بچانے کی خاطر صرف پاکستانی بن کر سوچیں۔

لائیں ہیں ہم طوفان سے کشتی نکال کے
اس ملک کو رکھنا میرے بچو سنبھال کے
طاہرہ مسعود ۔ کینیڈا
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
اپنے ملک میں ہوئے ہر پریشان کے لیے نکلو

توڑنے مدتوں سے بنے زاندں کے لیے نکلو

اپنے بچوں کی اونچی پرواں کے لیے نکلو

اس بستی کے دکھی انساں کے لیے نکلو

بے مکاں تم تو اپنے مکاں کے لیے نکلو

اپنے ضمیر کے بھی تو اطمینان کے لیے نکلو

چلو اب گھر سے عمران کے لیے نکلو

شہباز نہیں شہناز خالد
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
خوب گہما گہمی ہے کل تقریب دس کروڑ پاکستانی اہنے حق رائے دہی کا استعمال کریں گئے مختلف ٹی وی چینلز اور مختلف آرا ۔۔۔۔ قوم ہمیشہ کی طرح مکمل کنفیوژ
ذات برداری اور زبان کی بنیاد پر دیے جانے والے ووٹ سے کیسے حکمران آتے ہیں تاریح گواہ ہے اب بھی حالات کچھ مختلف نہیں بلکہ شاہد بد تر ہیں مگر ہم پاکستانی بڑے جی دار ہیں اب بھی اچھے کی امید پر قائم ہیں جب ہم خود اچھے نہیں تو حکمران کہاں سے اچھے آئیں گئے؟
میں نا امید نہیں ہوں مگر بے وقوفوں کی جنت میں بھی نہیں رہتی ہوں
مدیر اعلی
منزہ سہام مزرا
ماہنامہ دوشیزہ / سچی کہانیاں

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

پاکستان اور اس کی سیاست کے ںارے میں،کہنے کے لیے بہت سوچنا پڑتا ہے،ایسا لگتا ہے،عوام باخبر ہیں،اور حکومت بے خبر ،دعا ہے کہ اس بار وہ جیتے،وہ حکمران ہو،جو اسم اس ملک سے محںت کرے،اور عوام کو سوشل میڈیا کے علاوہ بھی کچھ کام کرنے کی تحریک دے،آمین
غزالہ رشید کراچی
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
آئیں 25 جولائی کو خدا کو حاضرو ناظر جان کر اپنے علاقوں میں ایسے افراد اور پارٹیوں کو ووٹ دیں۔
جوہر قسم کے تعصب سے پاک ہو۔ جو ہمارے لئے بنیادی ضروریات جیساکہ تعلیم،صحت،روزگار،امن پر کام کریں۔اور صحیح معنوں میں پیارے ملک پاکستان کا نام روشن کریں۔
ہر ایک فرد کا ووٹ بہت قیمتی ہے۔ضائع ہونے سے بچائے
موروثی، روٹی کپڑا مکان چھیننے والوں اور ازمائے ہوئے لوگوں کو ریجیکٹ کرنے کا موقع ہاتھ سے جانے نہ دیا جائے۔
جابر حسین سڈنی
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
مجھے کل میرے پرانے محلے سے اس خاتون کا فون آیا جو ہمارے گھر کام کرتی تھی بہت خود دار ۔۔ محنت مزدوری کر کے اپنا پیٹ پالتی ہے ۔۔۔ خیر اس کا فون آیا ” باجی نواز شریف نوں ووٹ پانا جے ”
میں اس کے حکم پہ حیران ہوئی پوچھا ” کیوں بھئی ایسا کیا کر دیا اس نے کہ تم اتنی پکی ہو گئی ہو؟ ”
کہنے لگی اس نے اتنے کام کیے ہیں ہمارے لیے سڑکیں بنائیں ۔۔ میٹرو بس بنائی”
میں نے پوچھا ۔۔ کوئی سکول ۔۔ کوئی ہسپتال کوئی کالج ۔۔ کوئی فیکٹری بنائی ؟ اتنے لوگ بے روزگار پھرتے ان کے لیے کچھ کیا ؟
کہتی ہے ” سانوں کی لوڑ اے پچھن ، سوچن دی مینوں تے موبیل (موبائل) دیتا اے اینا لوکاں نے فون شون کر واسطے ”
میں نے کہا ووٹنگ کے بعد لے لیں گی
وہ کہتی ہے “نہیں شیر جت گیا تے فیر نئیں لین گے
نالے روز دے 500 ملدے نیں ودھیا روٹی الگ ”
مجھے سن کے دکھ ہوا ۔۔ ہماری بھوک ہم سے سوچنے کی صلاحیت چھین لیتی ہے
لیکن یہ وقت ایک وقت کی روٹی اور 500 کی دھاڑی کے ہاتھوں بکنے کا نہیں ہے سوچیں کہ جس نے ہماری بھوک کو اتنا قیمتی کر دیا اس کے لیے ہماری کیا وقعت ہو گی ۔۔ ووٹ دینے سے پہلے اپنے ضمیر سے ضرور مشورہ کر لیں کہ اسے ایک وقت کی بریانی چاہیے یا عزت سے تین وقت کی روٹی ۔۔
وہ سکول کالج کی عمارت کو حسرت سے دیکھ کر گزر جانا چاہتے ہیں یا اس عمارت کا حصہ بننا چاہتے ہیں ۔۔
یاد رکھیے فقیر کی بھوک اس کو کھاتی ہے مگر بادشاہ کی بھوک ملک و ملت ۔۔
دلشاد نسیم ۔۔ لاہور
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
جاگتے ہوے لوگ کبھی اپنے ووٹ کا غلط استعمال نہیں کرتے.. اپنے ووٹ کے صیح استعمال سے ہی قوم کی تقدیر بدلی جا سکتی ہے.. آیے جوش سے نہیں ہوش سے ووٹ ڈالنے چلتے ہین عصمت طاہرہ
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
The nation of Pakistan do the right thing n vote for better future of Pakistan
Don’t think your vote counts to nothing
It’s your right, a chance to bring new changes to Pakistan. A chance to get your voice heard.

Saeema N Qureshi
London
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
Mera tajzia ye khta he k pak ka mustaqbil bht roshan he…llogo me pehli bar ye change nzr arha he k aazmay hoy ko dobara nai vote den ge…ar ye bht acha Change he…ar is me social media ka bht contribution he…zati tor pe me smjhti hon k vote zaroor zaroor dena chahy..
فریدہ مسرور کراچی
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
Azme Alishan ki khatar Niklo pakistan ki Khatar Niklo apni Pahchan ki Khatar. Plz vote for Youself and also guide your family to give vote for change not for criminals. Pakistan Zindabaad pak Army paendabaad.
Anjum Razaq
Londo
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
پاکستانیوں – یہ جو اج میرے ہاتھ میں مہر ہے, یہ مہر نہیں میری طاقت ہے – طاقت بھی اتنی بڑی, کہ میں جسے چا ہوں وزیر بناسکتا ہو – جسے چاہوں وزیر اعظم بنا سکتا ہوں – اور یہ جو گلی گلی سے گذر کر لوگ میرے گھر کی طرف آرہے ہیں, یہ میری منتیں کرنے آ رہی ہیں – یہ مجھ سے عہدے مانگنے آرہے ہیں – کوئی کہتا ہے مجھے وزیر بناو تو کوئی کہتا ہے مجھے وزیر اعظم بناو – ان سب کو میری طاقت کا اندازہ ہے – لیکن
ان سب کو یہ بھی معلوم ہےکہ میری یہ طاقت میرے پاس صرف ایک دن اور صرف ایک بار استعمال کیلیے ہے –
اسلیے مجھے اج ہی سوچنا چاہیے – اور اس طاقت کہ بہترین استعمال کرنا چاہیے
شاہ خالد اسلام آباد
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
خدا کرے کے میری عرض پاک پے اترے

وہ فصل گل جسے اندیشہ زوال نہ ہو

یہاں جو پھول کھلے کھلا رہے صدیوں
یہاں سے خزاں کو گزارنے کی مجال نہ ہو

یہاں جو سبزہ اگے ہمیشہ سبز رہے
اور ایسا سبز کے جس کی کوئی مثال نہ ہو

خدا کرے کے نہ خام ہو سر وقار وطن
اور اس کے حسن کو تشوش ماہ وسا ل نہ ہو

ہر ایک فرد ہو تہذیب و فن کا اوج و کمال
کوئی ملول نہ ہو کوئی خستہ حال نہ ہو

خدا کرے میرے ایک بھی ہم وطن کے لئے
حیات جرم نہ ہو، زندگی وبال نہ ہو

جو بھی نئی قیادت آئے اللہ کرے کہ وہ ملک و قوم کے لیے اچھی ہو، تعلیم عام ہو جہالت کا خاتمہ ہو ، اور سب سے بڑھ کر فرقہ وارئیت کا ناسور ختم ہو جو ہماری کتنی نسلوں کو تباہ کر گیا۔۔
عمران الحق پشاور
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
25 جولاءی کو اپنے ملک سے وفاداری کا ثبوت دیجیے۔ثابت کیجیے کے آپ ایک زندہ اور باشعور قوم ہیں ۔۔۔شخصیت پسندی کے خول سے آذاد ہو کر صرف پاکستان کی بہتری کے لیے سوچیں۔۔آپ کا ایک سہی فیصلہ پاکستان کے لیے بہترین مستقبل کی ضمانت ہے۔
کرن مہک کراچی
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
پیارے پاکستانی بہنو اور بھائیو، بچو اور بچیو! پاکستان کی کشتی اس وقت سخت ہچکولے کھا رہی ہے۔ ہر طرف بحری قزّاق اور سرکش لہریں ہیں۔ اسکےاندر بھی اس میں سوراخ کرنے والے موجود ہیں۔ اس کڑے وقت میں اس کے کشتی ران کا انتخاب پوری ایمانداری اور ذمہ داری سے کریں تاکہ یہ کشتی منجھدھار سے نکل کر پرسکون سفر پر کامیابی کی منزل کی طرف گامزن ہو سکے۔آمین
خدا کے لیے، اپنے لیے اور اپنے بچوں کے مستقبل کے لیے اس وقت صرف پاکستانی بن کر سوچیں۔ آپ کا ووٹ پاکستان کی امانت ہے ا سکو صرف کسی اہل کو دیں علاقائی لسانی اور عقائد کی فصیلوں اوررکاوٹوں کو عبور کریں پاکستان کو بچانے کی خاطر صرف پاکستانی بن کر سوچیں۔

لائیں ہیں ہم طوفان سے کشتی نکال کے
اس ملک کو رکھنا میرے بچو سنبھال کے
طاہرہ مسعود ۔ کینیڈا
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
الیکشن اپنی جگہ ۔۔ لیکن انسانی زندگی کی قیمت سب سے اہم ۔۔۔ جو بھی جیتے عوام کو پرسکون رہناچاہیے۔۔ لڑائی جھگڑے کا کوئ فائدہ نہیں ۔۔ اپنی جان کی حفاظت کریں۔۔ آپکےپیچھے ماں بہن بیٹی باپ بیٹا آپ کی زمہ داری ہے۔۔ اپنی زمہ داری کا احساس بھی کریں ۔۔ تانیہ رحمان ۔ دبئی
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
[9:05 PM, 7/24/2018] نگہت: السلام و علیکم….میرے عزیز ہم وطنو….آج خدا کو حاضر و ناظر جانتے ہوئے تمام تر مزہبی…لسانی…عصبی…اور جزباتی و موروثی وابستگی کو بالائے طاق رکھتے ہوئے اپنا حقِ رائے دہی استمال کریں اور اپنے خمیر کی آواز پر لبیک کہہ کر ووٹ دیں…باشعور عوام ملک کے بہتر مستقبل کی ضمانت ہے..ثابت کردیں کہ ہم بھیڑ یا ریوڑ نہیں بلکہ ایک زندہ قوم ہیں اور پائیندہ پاکستان کے امین ہیں…روشنی کا سفر کوئ نہیں روک سکتا…پرودگار پاکستان کی حفاظت فرمائے اور ہمیں حقیقی پاسبان اور نجاتِ دہندہ عطا فرمائے ….آمین
ڈاکٹر ثروت زہرا رضوی کراچی
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

…………….

Bare se bara badlao humesha ayk soch ka natija hota hy. Vote ayk taqat hy ise sirf kisi se wafadari sabit krne k liye zaya mt kije ise apne bachon k behter mustabil k liye istamaL vote ose dije jise ap behter samjhen .. Hadlao humesha soch lati hy or wo soch ap ki soch hy wo pehla Qadam ap hi ka hy.

میرو ماسڑ سیالکوٹ

…………………………

دوستو کل آپ کو اپنی رائے کے اظہار کا پورا موقع مل رہا ہے کوئی نہیں دیکھ رہا سوائے اللہ کے اس لیے کسی دباو کے بغیر اپنا حق استمال کریں اور پاکستان کو بہتر لیڈر دیں شکریہ

نعیمہ شہزاد لاہور

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

الیکشن 20018 اپنی نوعیت کے منفرد اور مختلف انتخابات ہیں ملکی سیاست کے کئی برج الٹ چکے ہیں نئے برج کھڑے کئے جانے کی توقعات ہیں کچھ عناصر اسے “آئ ایس آئی” اور “را” کے معرکہ کا نام دے رہے ہیں خاص طور پر کراچی کی باسی ہونے کے ناطے مجھے بھی ان انتخابات سے امید بھی ھے اور خوف بھی اس مرتبہ کراچی میں الیکشن کی وہ روایتی گہما گہمی اور جوش و خروش نظر نہیں ارہا جو کہ یہاں کے جوشیلے عوام کا خاصہ رہا ھے 1988 کے بعد سے یک جماعتی تاثر کے حصار میں رہا کراچی لیکن اس مرتبہ ووٹ بینک تقسیم نظر اتا ھے ایک طرف کپتان کے پر جوش حمایتی ہیں تو دوسری طرف بھائی کے حامی بھی بچے کھچی ہمت کے ساتھ سرگرم عمل نظر اتے ہیں مزہبی جماعتوں کے متعلق بھی کہا جا ریا ھے کہ وہ بھی کافی ووٹ کاٹنے کا سبب بنین گی حتمی صورتحال تو بیر حال کل پولنگ ختم ہونے کے بعد یی واضح ہوگی اب یہ الیکشن ھے یا سلیکشن ہم تو صرف اس ارض وطن کی سلامتی بہتری اور ترقی استحکام کے لئے دعا گو ہیں
سہیلہ سلیم

……………

It is a matter of immense pleasure and pride for me to be able to see once again the result of a democratically elected government paying the way for Caretaker Government leading up-to holding elections by meeting all their responsibilities despite all the challenges.
Tomorrow is an auspicious day for Pakistan as the nation will go to polls. While many challenges have been overcome, there are many challenges and roadblocks to democracy as the recent terrorist’s cowardly attack on political leaders and process have shown. Despite these concern, the people of Pakistan have expressed their solidarity in continuing the democratic process to elect a government of their choice. The people of Pakistan deserve a huge congratulation for continuing this struggle. We , their brothers and sisters while settled in other countries would reaffirm and assure them of our full involvement for every activity that supports the welfare and betterment of Pakistan.
Tomorrow is an important day to reflect upon our future, I earnestly appeal to all fellow Pakistanis to vote on the basis of issues and vote for those leaders who will bring about prosperity, safety, peace, moral values and progress for Pakistan by fighting against corruption, nepotism and injustice. Lets hope we are able to elect leaders who will prioritise education, health, welfare of the people and build infrastructures and focus on water, food and human security and put Pakistan first .
Let us all hope and pray for this but more important each one of us strive for this with the power of vote in our hand.

Insaf Ali Khan
President
Pak -Aus Engineers Association

…………………

I’m no writer Nighat Baji. All I can say is I am very optimistic and excited, watching election coverage with a lot of positive energy and hope. Alhumdulillah I can see our nation is ready for change and making loads of prayers that Allah makes it happen. May Allah make this election a source of prosperity and positive change for our nation. Ameen

ڈاکٹر فوزیہ اسد سڈنی

…………………..

وطن عزیز اس وقت بے شمار مسائل کا شکار ہے اور یہ الیکشن طے کریں گے کہ ہم نے ملک کو کس طرف لے کر جانا ہے۔ یہ الیکشن ملک کی تاریخ کے سب سے دلچسپ نظر آ رہے ہیں۔ پچیس جولائی کو اس انسان کو ووٹ دیں جو واقعی ہمارے مسائل حل کر سکتا ہے۔ اگر آپ ووٹ نہیں دیں گے تو کل کو آپ شکایت کرنے کے حقدار بھی نہیں۔ لہذا اپنا حقِ رائے دیہی ضرور استعمال کریں اور اس ملک کو اندھیروں سے نکالنے میں مدد کریں۔
ذیشان عبدل گوندل – سڈنی

………………………

میرے پیارے اور معزز ھم۔وطنوں!!
تین باتیں یاد رکھنے کی ھیں :ز
1۔ووٹ لازمی کاسٹ کرنا ھے
2۔ ووٹ ایسی سیاسی جماعت کو نیئں دینا جن میں پارٹی کی صدارت ھمیشہ ایک ھی خاندان میں یعنی موروثی چل رھی ھے۔
3۔ مذھب کے نام پر انسان دشمن جماعتوں کو ھرگز ووٹ نہ دیجیئے گا ورنہ آپ کآ اور آپ کے بچوں کا مستقبل تاریک ھو جاے گا۔
ووٹ لازمی کاسٹ کیجیئے گا۔ ھو سکتا ھے آپ کا ووٹ ھی فیصلہ کن ووٹ ھو!!!
غلام حسین غازی، شیخوپوزہ۔
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
Muhammad Aqeel Abid

Please vote for Pakistan. Forget all the faces but remember Pakistan vote to who you think loves Pakistan. I request all Pakistanis to vote for better Pakistan and better future of our nation. And above all must on election day. Don’t think that one can’t make a difference. Surety one can make a lot of difference. BECAUSE. a million count starts with One. SO please vote. Pakistan zinda bad
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

……………………

مجھے دکھاوے والی ترقی نہیں چاہیے ، جو نظرتوآتی ہولیکن اس کا فائدہ مخصوص طبقے گروہ یا شہرتک ہی پہنچے۔۔سڑکیں چاہیں نہ موٹرویز، نہ اورنج ٹرین ،۔۔اچھی تعلیم ، اچھی صحت کا انتطام اور سچااورکھراپاکستان چاہیے ،،ایسے منصوبے چاہیں جو نیک نیتی سے بغیر کرپشن اور دکھاوے کے پاکستان کے عوام کیلئے شروع کئے جائیں۔۔۔پیارےلوگو۔۔۔۔اپناحق پہنچانو۔۔۔ووٹ ضمیرکی آوازپردے کراپنا فرض اداکرو۔۔

ناصر زیدی لاہور

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

Fight for Change —After struggle of 22 year, a cricketer turn politician Imran Khan to give tough time to over 100 year old political party Muslim League and 48 year old political party Pakistan People Party in Pakistan
In elections on July 25 2018

Mahar Qasim Ali Wasli
President Pakistani Community in Liberia
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
Who’s Excited for tomorrow?
Just a humble request k aaj jub Esha ki namaz perhain tu 2 Nafil Apnay Mulk ki behtri k liye perh k Dua kerain k Allah Humaray Haq mai behter keray AAMEEN…
فریحہ علی سڈنی
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
Ironically Imran Khan or his electables are nowhere an ideal choice to be frank. But situation is asking Pakistan whether you want to take a chance against corrupt politicians ruling over the past 30 years or you still want Maryam, Hamza, Bilawal Zardari to continue for another 30 years? 25 July Elections will decide the future of Pakistan and its people.
Regards!
قریشی منظور لاہور
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
کل جب آپ ووٹ ڈالنے لگیں تو صرف ایک بار انڈین فوج کے عہدہدار کا وہ جملہ یاد کر لیجیے گا کہ
‏”We had invested in Nawaz Shareef.” باقی جو آپکا ضمیر گوارہ کرے
شاہین اشرف علی کویت
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
25 July ko Hony waly elecshan ko sabo tasr krny ki gehri sazshen ki ja rahi hen
Hesas edaron ko ruswa kr ky milk men bad amni ki fza
Qaem ki ja rhi he.
Mgr ho ga WO jo allah chahy ga.
Jb haq ghlib hota he to batilMIT jata he.
Pakistan ki tarekh men ye aek tarekh saaz elecitshon sabot ho ga.
*Riaz Hussain Shahid.Qabula Shreef .pakpattan .pakistan
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
Tomorrow is the day where our nation can choose the different direction by choosing some one who has never been tried, Imran Khan other wise we have tried both the major parties but no results… so please try him this time and hope for the best and if he doesn’t deliver then change him in next elections but don’t keep making the same mistake and hope for diferent results…
[2:20 PM, 7/24/2018] نگہت: Touqeer yousaf Malik
سڈنی سے
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

This is not an election. This would be another dilemma like Partition of East & West Pakistan. May be Punjab, Sindh, Blochistan and KPK give an independence of Niazi’s new Pakistan, restricted them to Siraiki Belt, boundry started from Qasoor to South Punjab alongwith Rajisthan.
زبیر منور اسلام آباد

……………

 Bus bohat ho giya ab bhi agar hum nahi jagy to phir hamara allah Hafiz
فریحہ علی سڈنی

…………………

الله کریم ھمارے ملک کو سلامت رکھے ہمارا اور ہماری آنے والی نسلوں کا سائبان ھے – میرا پاکستان الله اور اس کے رسول کے حکم اور رضا سے بنا ھے یہ قائم اور دائم رہے گا ، الیکشن میں کوئ ووٹ دے یا نہ دے اس سے اس کو کوئ فرق نہیں پڑے گا کیو نکہ
” پاکستان ایک نور ھے اور نور کو زوال نہیں “

خلیل سلطان صدیقی اشرفی ۔
لاہور

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

To all overseas Pakistanis who are passionate for the betterment of Pakistan, this is the time for you to ensure that your friends, relatives and everyone you know in Pakistan goes out and vote in this elections to whichever candidate or party they like.
This is the only way Pakistan can progress.
Erum Atif , VP, Meri Pehchan,Sydney

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

Mr Shujaat Syed and Dr Mrs Midhat Shujaat

Good Leaders are trail blazers . Making a path for others to follow. Great leaders , however ,inspire people to reach higher , dream bigger and acheive greater. Perhaps the most important leadership skill you can develop is the ability to provide inspiration to your team . If you inspire them to reach for the stars , they just might bring you back the moon. We , for Pakistan always hope for great leader and leadership. Imran Khan can be a great leader for his team, the Pakistani awam. He has the ability to inspire his people for stars and in return his Awam will bring him the moon for the brightness of Pakistan. Pakistan Zinda a bad.
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
Dr Naheed

Plz go to vote on25th .Vote is an expression of our opinion..if we dont go to to cast.all of our analysis .sharing an feeling goes wasted. an u dont contribute to counter the forces /persons responsible for destruction So every one should go an vote to a person ..to give him a chance to bring out the country from crisis situation..Hope for best ..
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
Shafaq

Khodara ab na… na karna… ab jis tharah parinda apnay paro mae apnay nanay bacho ko chopa kar hofazat karta hay onka hosla bharata hay mari apni qoam ki mao say request hay aj apnay bacho ko os hifazat ka wasta dae kar ak shirni ki tharah bahadroi say bacho kay sath apna haq istemal karnay as pnay bacho kay future kay leay ak roshan Pakistan kay leay duniya mae Pakistan ki sarbolandi kay leay kaal tariq raqam karnay kay leay… apna apna vote zaror dalaine… kuokay hum ko lotairo qasibo ko batana hay ..Hum Zinda qoam haine ..ak nasal nay qurbani dae di ab apni naslaine bachani haine INSHALLHA hum jeetaine gay
Pakistan ZINDABAD payinda bad
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

یہ کہے دینے سے ھم اپنا ملکی فرض پورا نہیں ادا کر سکتے کہ
“اگر ھم ووٹ نہیں دے گئے تو کیا فرق پڑ جائے گا “
ایک ایک ووٹ کی اپنی حثیت ہے
جائے باھر نکلے اپنا زندہ ھونے کا صیحح حق ادا کرے
جائز ووٹ دے کے اپنا آپ ھونے کا ثبوت دے
اپنے پاکستان کو بچائے

نزہت نسیم
لندن

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

الیکشن کوئی عید اور چاند رات جیسا تہوار نہی۔
یہ ھماری اپنے وطن اور اس زمین سے محبت کا دن ھے۔
ھم کتنا اپنی زمداری کو سمجھتے ھیں۔
یہ ھمارے ضمیر کی سچائی کا دن ھے۔اپنے حق کو لینا سیکھیں اور سچائی کے ساتھ فیصلہ کریں۔
کسی کی شخصیت پہ ووٹ

بننہ دیں۔ ھم نے اس ملک کو بچانا ھے۔
اس الیکشن کو اپنی ایمانداری کے ساتھ کامیاب بنائیں۔

اپنے لیے اپنی آ نے والی نسلوں کے لیے۔

سعدیہ کاشف فیصل آباد

……………..

ووٹ آپکے ضمیر کی آواز ہے۔ اس لیے ووٹ کے تقدس کا خیال کرتے ہوئے اسکا صحیح استعمال ہماری اخلاقی ذمہ داری ہے۔ سب سے پہلے ہمیں خود اپنے ووٹ کے تقدس کا خیال کرنا ہوگا اپنے ووٹ کے تقدس سے مراد لالچ اور خوف سے بے نیاز ہو کر اپنی رائے کا اظہار ہے۔

محمد سہیل ، سٹی بھمبر آزاد کشمیر

…………….

دوستو
اپنے حق کا استعمال کیجئے اپنی رائے دیجئے ،ووٹ بغیر کسی دباؤ اور لالچ کے اپنے وطن کے لئے ۔ثانیہ شیخ
لاہور

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
There is no reason not to vote for Imran khan. Everyone else has been given a chance and has failed. Imran Khan is our last hope.
A humble request to all… Tomorrow is a very important day please choose the right person. At least once just think of your country PAKISTAN, think of your motherland without which you will be nothing.

سہیلہ طارق
لاہور سے
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
سچ پوچھیں تو کسی کو ووٹ دینے کو دل ہی نہیں کرتا الیکشن کیا ڈرامہ ہے پاکستان کا ۔۔۔۔
بہر حال جو امیدوار ہیں ان میں سے کسی کو تو ووٹ دینا ہی ہو گا ۔۔۔
اللہ کرے جیتنے والا پاکستان کو سنوار دے آمین
نوشی عقیل سیالکوٹ
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
میرے پیارے بہنو اور بھائیو!
25 جولائی 2018 کو مذھب کے نام پر خونخوار طاقتوں کو شکست فاش دینے کا آخری موقع ھے ورنہ یہ آپ کے مستقبل کو نگل جائیں گے۔
غلام حسین غازی شیخوپورہ
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
بدل چکا تھا پر بگڑ گیا ہے اے قوم تیری تقدیر کا تارہ
قسمت سے لوٹا ہے واپس ہم سب کی امید سہا را
شاید یے وہ وقت ہے جسکو آج تک جسے تم ڈہونڈ رہے تھے
اپنے بچوں ماں باپ کی خاطر
نکلو گھر سے پاکستان کی خاطر
نکلو گھر سے پاکستان کی خاطر
بدلو اپنی قسمت کا تارہ بدلو
پاکستان ہمارا

حنا علی سڈنی سے
……………

۔۔۔ 25جولائی 2018 کو پاکستان میں سیاسی جماعتوں کے بہت سے خوبصورت دعووں اور وعدوں اور دلفریب منشوروں سے لدے عام انتخابات ہورہے ہیں،اس دن عوام اپنی قسمت بنانے اور ملک کی ترقی و خوشحالی کے لئے ووٹ دینے ضرور نکلیں تاکہ چہروں کی تبدیلی کے ساتھ نظام بدلا جاسکے۔
عالمی اخبارکالم نگار محمد اعظم عظیم اعظم

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

آج ھم فیشن کے دلدادہ لوگ ھیں … “ان فیشن” ھی سمجھ کےووٹ دے دیں ? ( اور فیشن میں کیا چل رھا اتنی سمجھ تو ھے ھم میں)

Asmara Asim

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

” کپڑوں کی دُھلائی کرنی ہو تو کسی واشنگ پاؤڈر کے بارے میں چھتیس لوگوں سے پُوچھیں گے کہ ,
” رنگ خراب تو نہیں کرتا?”
” کپڑا تو نہیں ڈیمج کرتا?”
” کپڑا شرنک تو نہیں کرتا?”
” کپڑا پھیل تو نہیں جاتا?”
” کہیں یہ…..
” کہیں وہ….. ‘

اور جب خُدا خُدا کر کے پانچ سال بعد الیکشن میں سیاستدانوں کی دُھلائی کا وقت ہوتا ہے تو کَھبڑ کَھبڑ کُجھا کر کہتے ہیں ,
” میرے مامے کے چاچے کی پُھپھی کے دیور کا بھانجا کھڑا ہے الیکشن میں . ووٹ تو اُسی کو دینا ہے. برادری جو ہوئی “

ہونہہ….
روندے جمہوریت نُوں

ثمینہ تبسم

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

نگہت: دوستو ہمارے 20 منٹس بے حد اہم ہیں کیوں کہ انکا اثر پڑے گا اگلے 43800 گھنٹے (پانچ سال ) پر ۔ ۔
اس لیے بنا مقامی شخصیت کو بنا ذات برادری کو دیکھے ۔حقدار پارٹی کو ووٹ دو ۔اپنے 20 منٹس ضرور دو پاکستان کو عوام کو
جعفر حسین
سوشل میڈیا گروپ میاں چنوں پولیٹکس اور عوام
جعفر حسین تینوں کی ملتان سے

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

میں سرکاری ملازم ہوں اس لئے الیکشن کا پیغام ذاتی حیثیت میں دینے کی مجاز نہیں پہلے سرکاری ملازم بعد میں شہری ہوں اب معاشی زندگی کا تحفط ایک سرکاری ملازم کی ڈیوٹی کا حصہ ہے ورنہ زیادہ سے زیادہ یہ ہوتا ہے کہ معطل کر دیا جاتا ہے اور میں ٹہھری غریب ۔۔۔۔۔لیکن آپ کی محبت کی بےحد مشکور ہوں کہ آپ نے اتنی دور ہو کے بھی مھجے یاد کیا آپ کے لئے ہمیشہ دعا بہت سی خوشیوں کی سلامتی کی

نسرین فرید، ملتان

………………..

یہ زندگی کا آخری الیکشن نہیں اس لیے اگر آپ کی امیدوں کے حساب سے نتائج نہ بھی آئیں تو دل و دماغ کو کنڑول میں رکھیں ۔لوگ جتنا ہو سکے اپنے آپ کو کتاب یا تسبیح میں مصروف رکھیں . سر پر ٹھنڈا پانی ڈالتے رہیں ۔اپنا دھیان الیکشن نتائج سے جتنا ہٹا سکتے ہیں ہٹائیں ۔ یہ الیکشن آخری نہیں لیکن اگر خود پر قابو نہ رکھا تو آپ کا آخری الیکشن ضرور ہو سکتا ہے ۔

روبینہ فیصل

………….

 پاکستان کا روشن مستقبل اس عوامی فیصلے سے وابستہ ہے جس کے زریعے وہ اپنے آنے والے حکمرانوں کے انتخاب کافیصلہ کرنے والے ہیں یہ انتخابی فیصلہ عوامی شعور و بالیدگی کا امتحان ہے
محمد احمد ترازی

………..

پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کے چیئرمین عمران خان نے عوام سے اپیل کی ہے کہ وہ گھروں سے نکلیں اور ملک کے تاریخی انتخابات میں اپنا حقِ رائے دہی استعمال کریں۔

سماجی رابطے کی ویب سائٹر ٹوئٹر پر اپنے ایک پیغام میں عمران خان کا کہنا تھا کہ گزشتہ 4 دہائیوں میں پہلی مرتبہ قوم کو موقع ملا ہے کہ وہ اسٹیٹس کو کو شکستِ فاش سے دو چار کرے۔

انہوں نے انتباہ دیا ہے کہ عوام اس موقع کو ضائع نہ کریں۔

اپنے ایک اور پیغام میں عمران خان کا کہنا تھا کہ تحریک انصاف کے کارکنان جلد سونے کی کوشش کریں تاکہ خوب تازہ دم ہو کر کل پوری حاضر دماغی سے انتخابی عمل پر نگاہ رکھ سکیں اور تاریخ رقم کریں۔
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
شاہد آفریدی کی بیٹیوں کا عمران خان کی حمایت میں پیغام

تحریک انصاف کے ٹوئٹر اکاؤنٹ پر ایک ویڈو شائع کی گئی ہے جس میں معروف کرکٹر اور سابق کپتان شاہد آفریدی کی صاحبزادیاں تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان کے لیے نیک خواہشات کا اظہار کر رہی ہیں۔

سماجی رابطے کی ویب سائٹ پر شائع ویڈیو میں دیکھا جاسکتا ہے کہ شاہد آفریدی کی بیٹیاں کہہ رہی ہیں کہ پاکستان کو عمران خان بدلیں گے، عمران خان کو ووٹ دیا جائے۔
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
ملک بھر میں انتخابی میلے سجنے میں ابھی کچھ گھنٹے ہی باقی ہیں اور جوں جوں پولنگ کا وقت قریب آتا جا رہا ہے، اہم شخصیات ووٹ کاسٹ کرنے کے لیے عوام کی حوصلہ افزائی کرتی دکھائی دے رہی ہیں۔

پاکستان کی قومی کرکٹ ٹیم کے سابق کپتان محمد حفیظ نے بھی عام انتخابات کے حوالے سے اپنے ایک مختصر پیغام میں عوام کو 25 جولائی کو ہر حال میں ووٹ کاسٹ کرنے کے لیے کہا۔

ٹوئٹر پر جاری اپنے ویڈیو پیغام میں محمد حفیظ نے عوام کو احساس دلایا کہ ان کا ووٹ پاکستان کی بہتری کے لیے کتنا اہم ہے۔

محمد حفیظ نے اپنے پیغام میں عوام کو گزارش کی کہ وہ 25 جولائی کو ہر حال میں ووٹ کاسٹ کرکے پاکستان کے بہتر مستقبل کے لیے کردار ادا کریں۔

سابق کپتان نے کہا کہ جس بھی شخص کو پاکستان کے بہتر مستقبل کے لیے جو بھی پارٹی اچھی لگتی ہے وہ اسے ہی ووٹ کرے۔
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
انتخابات میں جہاں سیاسی حریفوں کے درمیان کانٹے کا مقابلہ ہے تو وہی ماضی کے سخت مخالف کچھ مقامات پر ایک دوسرے سے ہاتھ ملا بیٹھے ہیں۔

ایسا ہی کچھ سندھ کی سیاست میں ہورہا ہے، جہاں ایک طرف پیپلز پارٹی ہے تو اس کے مخالفت میں تمام قوم پرست جماعتیں متحد ہو کر جے ڈی اے کے پلیٹ فارم سے لڑ رہی ہیں، تاہم ماضی کی دو بڑی سیاسی حریف متحدہ قومی مومنٹ( ایم کیو ایم ) اور پاکستان تحریک انصاف ( پی ٹی آئی ) بھی ایک پیج پر آگئی ہیں۔

سندھ میں سکھر کے حلقے سے قومی اسمبلی کی نشست پر تحریک اںصاف کے امیدوار کو ایم کیو ایم کی حمایت حاصل ہے اور اس بات کا اعلان خود متحدہ پاکستان کے سینئر ڈپٹی کنوینر عامر خان اپنی انتخابی مہم میں کرچکے ہیں۔

سکھر میں انتخابی مہم کے دوران کارکنان کو یہ کہہ رہے تھے کہ 25 جولائی کو ہر ساتھی، شہری کو اپنا حق ادا کرنا ہوگا اور قومی اسمبلی پر بلے اور پی ایس 25 پر پتنگ پر مہر لگانی ہوگی۔
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

مرتبہ

ڈاکٹر نگہت نسیم

SHARE

7 COMMENTS

  1. Khodara ab na… na karna… ab jis tharah parinda apnay paro mae apnay nanay bacho ko chopa kar hofazat karta hay onka hosla bharata hay mari apni qoam ki mao say request hay aj apnay bacho ko os hifazat ka wasta dae kar ak shirni ki tharah bahadroi say bacho kay sath apna haq istemal karnay as pnay bacho kay future kay leay ak roshan Pakistan kay leay duniya mae Pakistan ki sarbolandi kay leay kaal tariq raqam karnay kay leay… apna apna vote zaror dalaine… kuokay hum ko lotairo qasibo ko batana hay ..Hum Zinda qoam haine ..ak nasal nay qurbani dae di ab apni naslaine bachani haine INSHALLHA hum jeetaine gay
    Pakistan ZINDABAD payinda bad

  2. Good Leaders are trail blazers . Making a path for others to follow. Great leaders , however ,inspire people to reach higher , dream bigger and acheive greater. Perhaps the most important leadership skill you can develop is the ability to provide inspiration to your team . If you inspire them to reach for the stars , they just might bring you back the moon. We , for Pakistan always hope for great leader and leadership. Imran Khan can be a great leader for his team, the Pakistani awam. He has the ability to inspire his people for stars and in return his Awam will bring him the moon for the brightness of Pakistan. Pakistan Zinda a bad.

  3. میرے پیارے اور معزز ھم۔وطنوں!!
    تین باتیں یاد رکھنے کی ھیں :ز
    1۔ووٹ لازمی کاسٹ کرنا ھے
    2۔ ووٹ ایسی سیاسی جماعت کو نیئں دینا جن میں پارٹی کی صدارت ھمیشہ ایک ھی خاندان میں یعنی موروثی چل رھی ھے۔
    3۔ مذھب کے نام پر انسان دشمن جماعتوں کو ھرگز ووٹ نہ دیجیئے گا ورنہ آپ کآ اور آپ کے بچوں کا مستقبل تاریک ھو جاے گا۔
    ووٹ لازمی کاسٹ کیجیئے گا۔ ھو سکتا ھے آپ کا ووٹ ھی فیصلہ کن ووٹ ھو!!!
    غلام حسین غازی، شیخوپوزہ۔

  4. Please vote for Pakistan. Forget all the faces but remember Pakistan vote to who you think loves Pakistan. I request all Pakistanis to vote for better Pakistan and better future of our nation. And above all must on election day. Don’t think that one can’t make a difference. Surety one can make a lot of difference. BECAUSE. a million count starts with One. SO please vote. Pakistan zinda bad.

  5. Fight for Change —After struggle of 22 year, a cricketer turn politician Imran Khan to give tough time to over 100 year old political party Muslim League and 48 year old political party Pakistan People Party in Pakistan
    In elections on July 25 2018

    Mahar Qasim Ali Wasli
    President Pakistani Community in Liberia

  6. وطن عزیز اس وقت بے شمار مسائل کا شکار ہے اور یہ الیکشن طے کریں گے کہ ہم نے ملک کو کس طرف لے کر جانا ہے۔ یہ الیکشن ملک کی تاریخ کے سب سے دلچسپ نظر آ رہے ہیں۔ پچیس جولائی کو اس انسان کو ووٹ دیں جو واقعی ہمارے مسائل حل کر سکتا ہے۔ اگر آپ ووٹ نہیں دیں گے تو کل کو آپ شکایت کرنے کے حقدار بھی نہیں۔ لہذا اپنا حقِ رائے دیہی ضرور استعمال کریں اور اس ملک کو اندھیروں سے نکالنے میں مدد کریں۔
    ذیشان عبدل گوندل – سڈنی

  7. This is going to be a happen first time in my life to cast vote freely….No pressure of any political party, no harassment no threats…Now this is our responsibility being citizen to choose right candidate for bright future of Pakistan.
    I think it time to pay back to our country to save democracy and integrity…Please tomorrow 25th July cast your vote….

LEAVE A REPLY