خود کش بمبار جب درگاہ میں داخل ہوا تولوڈ شیڈنگ کے باعث بجلی نہیں تھی

0
149

سہون میں درگاہ لعل شہبازقلندرپردھماکا کیسے ہوا؟ قانون نافذ کرنےوالے اداروں کو شواہد مل گئے۔ خود کش بمبار جب درگاہ میں داخل ہوا تو بجلی نہیں تھی۔

تفتیشی ذرائع کے مطابق خودکش حملہ آور درگاہ میں گولڈن گیٹ سے داخل ہوا۔ درگاہ میں شام پونے سات بجے لوڈ شیڈنگ کے باعث بجلی جاتی ہے۔ ممکنہ طور پرحملہ آوراسی وقت داخل ہوا جب لائٹ نہیں تھی۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ خود کش حملہ آورجب برقعہ پہن کردرگاہ میں داخل ہوا تو لیڈی سرچر موجود نہیں تھی۔ مبینہ خودکش حملہ آور راہداری سے ہوتا ہوا سیدھا مزار میں داخل ہوگیا اور قبر کے دوسری طرف خود کو دھماکے سے اڑایا۔

دھماکا شام چھ بج کر پچپن یا ستاون منٹ پر ہوا جب درگاہ میں لائٹ نہیں تھی۔ دھماکا ہوتے ہی تین سو سے چار سو میٹر کے دائرے میں انسانی اعضا اور اشیا بکھر گئیں

ادھر امریکا نے سیہون شریف میں ہونے والے خود کش دھماکے کی شدید مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ پر امن زائرین پر حملہ بزدلانہ اور شرمناک ہے، دہشت گردی کے خلاف جنگ میں پاکستان کے ساتھ ہیں۔
امریکی محکمہ خارجہ کے ترجمان مارک ٹونر نے سہون شریف میں ہونے والے خودکش دھماکے کی شدید الفاظ میں مذمت کرتے ہوئے ہوئے اسے شرمناک قرار دیا ہے۔

ترجمان کا کہنا تھا کہ سہون میں پر امن زائرین پر حملہ بزدلانہ اور شرمناک کارروائی ہے، دہشت گردی کیخلاف جنگ میں پاکستان کے ساتھ ہیں۔

امریکی محکمہ خارجہ کے ترجمان مارک ٹونرکا کہنا ہے کہ امریکا خطے کے استحکام کے لیے اپنے عزم پر قائم ہے، حملے کے ذمہ داروں کو کٹہرے میں لانے کیلئے پاکستان کی حمایت کرتے ہیں

اسی دوران وزیرقانون پنجاب رانا ثناء اللہ کا کہنا ہے کہ جب تک افغانستان میں قائم خود کش بمبار فیکٹریاں بند نہیں ہوتیں،حملوں کا خطرہ موجود رہے گا

SHARE

LEAVE A REPLY