گزشتہ رات سکھر میں سی ٹی ڈی کے ہاتھوں ہلاک ہونے والے دہشت گرد کی شناخت ہوگئی ہیں کامران بھٹی کالعدم تنظیم لشکر جھنگوی سندھ کا نائب امیرتھا جو امجد صابری قتل کیس،مہران بیس اور چوہدری اسلم پر حملوں میں ملوث تھا۔

ایس ایس پی سٹی عمر شاہد اور ایس پی سی ٹی ڈی عرفان سموں نے مشترکہ پریس کرتے ہوئے بتایا کہ گزشتہ روز سی ٹی ڈٰی کے ہاتھوں مارے جانے والے دہشت گرد کی شناخت کامران بھٹی کے نام سے ہوئی

پولیس رپورٹ کے مطابق ہلاک دہشت گرد سندھ میں لشکر جھنگوی کا نائب امیرکی حیثیت سے کام کرتا تھا جبکہ اس کا تعلق لشکر جھنگوی کی ذیلی تنظیم نعیم بخاری گروپ سے تھا ہلاک دہشت گرد کراچی میں نیوی کی بسوں پر حملے سمیت امجد صابری قتل کیس،مہران بیس اور چوہدری اسلم قتل کیس میں بھی ملوث رہا۔

ایس پی سی ٹی ڈی کے مطابق شکارپور روڈ بلوچستان سے دہشت گردوں کے داخلے کی خفیہ اطلاع پر کارروائی جاری تھی کہ اس دوران موٹر سائیکل سواروں کو رکنے کا اشارہ کیا نہ رکنے پر ملزمان نے فائرنگ کردی سی ٹی ڈی کی جوابی فائرنگ میں ایک دہشت گرد مارا گیا جس کی شناخت کامران بھٹی کے نام سے کی گئی جبکہ اس کے 2 ساتھی فرار ہونے میں کامیاب ہوگئے

SHARE

LEAVE A REPLY