رمضان المبارک میں غیراعلانیہ لوڈشیڈنگ کراچی والوں کیلئے دردسر بن گئی۔ مختلف علاقوں میں بجلی کی عدم فراہمی سولہ سے اٹھارہ گھنٹے تک جا پہنچی ہے۔نیپرا کی ٹیم غیرمعمولی لوڈشیڈنگ کی تحقیقات کرنےکراچی پہنچ گئی۔

ماہ مقدس رمضان المبارک میں غیر اعلانیہ لوڈشیڈنگ نہ رک سکی۔ کےالیکٹرک ہٹ دھرمی بدستور جاری ہے۔شدید گرمی میں روزےدار بھی بلبلا اٹھے۔ غیر اعلانیہ لوڈ شیڈنگ نے رہی سہی کسر پوری کردی ۔ اضافی لوڈشیڈنگ کرکے کے الیکٹرک نے پچھلے تمام ریکارڈ توڑ ڈالے ۔

کراچی کے مختلف علاقوں میں لوڈشیڈنگ کا دورانیہ 16 سے 18 گھنٹوں تک جا پہنچا۔ کورنگی، شاہ فیصل، لیاقت آباد، ایف سی ایریا، ایف بی ایریا ، بلدیہ، اورنگی ٹاون، سرجانی اور ملیر لوڈشیڈنگ سے شدید متاثر ہورہے ہیں۔

نیپرا ٹیم نے کراچی میں بجلی بحران کی تحقیقات شروع کردیں ایڈوائزر ٹیکنیکل کی زیر نگرانی ٹیم کے الیکٹرک کے معاملات کی چھان بین کرے گی، اورلوڈشیڈنگ وجوہات کا پتہ لگائے گی

SHARE

LEAVE A REPLY