عراق کے نیم خود مختار کرد علاقے کی حکومت نے دعویٰ کیا ہے کہ بغداد حکومت کے فوجی دستے اور ایران کے تربیت یافتہ عراقی پیراملٹری گروپ کرکوک کے علاقے میں کردستان کی فورسز پر بڑے حملے کی تیاریاں کر رہے ہیں۔

کردستان کی علاقائی حکومت کی سکیورٹی کونسل کی طرف سے ٹوئٹر پر ایک پیغام میں بدھ کی شام کہا گیا کہ عراقی کردستان کی حکومت کو بغداد کے مسلح دستوں کی طرف سے خطرناک پیغامات موصول ہو رہے ہیں۔

اس ٹویٹ کے مطابق، جس کی تصدیق عراقی کردستان کے ایک اعلیٰ اہلکار نے بھی کر دی، عراقی دستوں کی طرف سے کرکوک اور موصل میں بڑی کارروائیوں کی تیاریاں کی جا رہی ہیں۔

SHARE

LEAVE A REPLY