سابق وزیراعظم نواز شریف، انکے بچوں اور داماد کے خلاف نیب ریفرنسز، مریم نواز اور کیپٹن ریٹائرڈ صفدر احتساب عدالت میں چوتھی بار پیش ہوئے، نواز شریف کی عدم موجودگی کے باعث گواہوں کی شہادت ریکارڈ نہ ہوسکی جس پرعدالت نے سماعت 3 نومبر تک ملتوی کر دی۔
تفصیلات کے مطابق اسلام آباد کی احتساب عدالت کے جج محمد بشیر نے نیب کی جانب سے دائر تین ریفرنسز کی سماعت کی۔ اس موقع پر نواز شریف کی جانب سے ان کے نمائندے ظافر خان، صاحبزادی مریم نواز اور داماد کیپٹن (ر) محمد صفدر کمرہ عدالت میں موجود تھے۔ سابق وزایراعظم کی عدم موجودگی پر عدالت نے ایون فیلڈ ریفرنس میں نواز شریف کے ضامن کو نوٹس جاری کرتے ہوئے سماعت تین نومبر تک کے لئے ملتوی کر دی۔ استغاثہ کے گواہ جہانگیر احمد اور سدرہ منصور عدالت میں بیان ریکارڈ کرانے کے لئے موجود تھے لیکن نواز شریف کی استثنیٰ کی درخواست کے باعث گواہان کے بیانات قلمبند نہیں کئے جاسکے۔
واضح رہے لندن فلیٹس، فلیگ شپ انویسٹمنٹ کمپنیز اور العزیزیہ سٹیل ملز ریفرنسز میں نواز شریف، مریم نواز اور کیپٹن (ر)صفدر پر فرد جرم عائد کردی گئی جبکہ فلیگ شپ انویسٹمنٹ کمپنیز اور العزیزیہ سٹیل ملز ریفرنسز میں صرف نواز شریف پر فرد جرم عائد کی گئی ہے، ان تینوں ریفرنسز میں نواز شریف کے صاحبزادوں حسین نواز اور حسن نواز کو مفرور قراردیدیا گیا ہے۔

SHARE

LEAVE A REPLY