سیکیورٹی ایکسچینج کمیشن آف پاکستان کے سابق چیئرمین ظفر حجازی پر چوہدری شوگر مل ریکارڈ ٹمپرنگ کیس میں فرد جرم عائد کر دی گئی۔

اسلام آباد کی سپیشل جج ارم نیازی کی عدالت میں ملزم ظفر حجازی پیش ہوئے۔ دوران سماعت سابق چیئرمین ایس ای سی پی ظفر حجازی کو فرد جرم پڑھ کر سنائی گئی۔ فرد جرم میں کہا گیا ہے کہ ظفر حجازی نے چوہدری شوگر مل کے ریکارڈ میں ٹمپرنگ کی اور اس کے لئے اپنے ماتحت افسران پر دباؤ ڈالا۔

ظفر حجازی نے عدالت میں صحت جرم سے انکار کیا۔ ان کا کہنا تھا کہ انھوں نے کوئی ریکارڈ ٹمپرنگ نہیں کی اس لئے یہ کیس نہیں بنتا۔ ایف آئی اے کے پراسیکیوٹر نے موقف اختیار کیا کہ گواہان موجود ہیں عدالت میں ثابت کریں گے کہ ریکارڈ میں ٹمپرنگ ہوئی تھی۔ عدالت نے ایف آئی اے سے ظفر حجازی کیخلاف شہادتیں طلب کرلیں۔

SHARE

LEAVE A REPLY