وزیر مملکت برائے داخلہ طلال چوہدری نے کہا ہے کہ عدالتی فیصلے سے نوازشریف کے موقف کو تقویت ملی ہے،عدل کے نظام میں انصاف کو تولا جائے نہ کہ بیلنس کیا جائے۔

جیو نیوز کے پروگرام ’آج شاہزیب خانزادہ کے ساتھ ‘ میں گفتگو کرتے ہوئے طلال چوہدری نے کہا کہ ووٹ توڑنے کے لئے نوازشریف پر طرح طرح کے الزامات لگے، ملک کا مستقبل جمہوری نظام کےچلتےرہنے،عوامی رائےکےاحترام میں ہے۔

ان کا کہناتھاکہ عمران خان نے آدھے درجن سے زائد مرتبہ عدالت میں موقف بدلا،عمران خان نےآف شور کمپنی کااعتراف کیاتھا،اس پر بھی کہا جاتا ہے کہ آپ سے کوئی غلطی نہیں ہوئی۔

وزیر مملکت برائے داخلہ نے کہا کہ عمران خان اور جہانگیر ترین دونوں ہی نے آف شور کمپنی ظاہر نہیں کی ،پی ٹی آئی سربراہ سے متعلق فیصلے کے معیار پر اس طرح کے ہر مقدمے میں بات ہوگی ۔

انہوں نے استفسار کیا کہ کیا آج کے کیس میں نگراں جج کی ضرورت نہیں؟نگراں جج صرف نوازشریف کے کیس پر چاہیے؟مزید کہا کہ ہمیں مشورےدیےجارہے ہیں کام بس کرو،اقتدارکے مزے لو۔

SHARE

LEAVE A REPLY