رانا ثناء اللہ کا کہنا ہے اگر جماعتوں کے سربراہوں نے زمہ دارانہ رویہ نہ اپنایا تو ہر کوئی جوتا کلب کا ممبر بن جائے گا۔ انہوں نے کہا جوتا کلب میں شیخ رشید ٹاپ کرے گا کیونکہ راولپنڈی میں سینکڑوں لوگ اس کے پیچھے ہیں۔

صوبائی وزیر قانون نے جوتا بازی، نفرت اور پرتشدد رویوں کا ذمہ دار عمران خان کو قرار دے دیا۔ رانا ثناء اللہ کا کہنا تھا جب مخالفین کو پکڑ لو، مار دو، گھسیٹ دو کی تقاریر ہوں گی تو پھر کارکنوں کا ردعمل فطری ہوگا۔ انہوں نے کہا جو جوتا بازی شروع ہوئی ہے اس شدت پسندی کو ایجاد کرنے والا عمران خان ہے۔

رانا ثناء اللہ کا کہنا تھا کہ 2018 کے الیکشن میں سیاسی انجینئرنگ نہیں ہوسکے گی، الیکشن ضرور ہوگا کیونکہ روکنے والوں نے خود اب اپنی پارٹی بنا لی ہے۔ انہوں نے کہا آصف زرداری اور عمران خان اسٹیبلشمنٹ کے چہرے ہیں ، نامعلوم فرشتہ پارٹی کا ایک پاؤں زرداری اور دوسرا عمران خاں کے کندھے پر ہے، اسٹیبلشمنٹ کا ٹولہ عوامی نفرت کا شکار بنے گا ۔ ان کا کہنا تھا کہ مرزا رمضان بیگ مسلم لیگی کارکن ہے مگر اس پر تشدد کر کے بیان لیا گیا۔

SHARE

LEAVE A REPLY