فاقی کی جانب سے الیکشن ایکٹ کی دفعہ 6 کی ذیلی دفعہ تین میں ترمیم کی منظوری دی گئی ہے۔ کابینہ نے انتخابی تنازعات نمٹانے کیلئے الیکشن ٹریبونل میں ججزکی تعداد 2 تک محدود کر دی ہے۔

اس وقت الیکشن ٹریبیونل میں تین یا زائد ججز رکھے جاسکتے ہیں۔وفاقی کابینہ کے مطابق ترمیم کے بعد دو ججز آسانی سے دستیاب ہوسکیں گے اور انتخابی عذرداری جلد نمٹائی جا سکے گی۔

ترمیم کے بعد 2013ء کے انتخابات کی طرح دھاندلی کی آوازیں نہیں اٹھتی رہیں گی۔ترمیم کا مقصد دھاندلی کی شکایت کی صورت میں اسے آئین کے تحت 120 دن میں نمٹانا یقینی بنانا ہے۔ موجودہ دفعات کے تحت تین یا اس سے زائد ججز کی دستیابی بڑا مسئلہ تھا۔

SHARE

LEAVE A REPLY