الیکشن کمیشن نے جے یو آئی ف کے سربراہ مولانا فضل الرحمان کا الیکشن کمیشن سے استعفیٰ کا مطالبہ مسترد کر دیا۔

الیکشن کمیشن کے ذرائع کا کہنا ہے کہ انتخابات 2018 صاف شفاف اور غیر جانبدارانہ ہوئے جس میں عوام نےآزادانہ ماحول میں حق رائے دہی استعمال کیا۔بغیرثبوت کےانتخابات کی شفافیت کے خلاف بیانات افسوسناک اورحقائق کے برعکس ہیں۔

الیکشن کمیشن کے مطابق ذاتی مفادات کی بنیاد پرپاکستانی عوام کے مینڈیٹ کا احترام نہ کرنا جمہوریت کے منافی ہے،الیکشن کمیشن نے انتخابی تنازعات کے حل کیلئے ٹریبونل مقرر کردیے ہیں،جس کو شکایت ہے وہ الزامات کے بجائے ٹریبونل میں پٹیشن دائر کرے۔

SHARE

LEAVE A REPLY