مصری دارالحکومت میں ایک قبطی کلیسا پر بم حملے کی ذمہ داری دہشت گرد تنظیم داعش نے قبول کر لی ہے۔ داعش کے ایک بیان کے مطابق ان کے ایک جنگجو نے کلیسا میں یہ بم دھماکا کیا تھا۔

اس تناظر میں سماجی ویب سائٹس پر بھی آئی ایس کا بیان گردش کر رہا ہے۔ اس سے قبل مصری حکام نے اس واقعے کی ذمہ داری کالعدم اخوان المسلمین پر عائد کی تھی۔ اتوار کے روز قاہرہ کے ایک قبطی کلیسا پر کیے جانے والے حملے میں پچیس افراد ہلاک ہوئے تھے۔

SHARE

LEAVE A REPLY