چیف جسٹس اسلام آباد ہائیکورٹ نے دس سالہ بچی طیبہ پرمبینہ تشدد کے معاملے کا نوٹس لیتے ہوئے رجسٹرار کو انکوائری کا حکم دے دیا جبکہ واقعہ کا مقدمہ بھی درج کر لیا گیا ہے۔
دس سالہ بچی پر مبینہ تشدد کے معاملے کی خبر سماء پر نشر ہونے کے بعد قانون بھی حرکت میں آیا۔ اسلام آباد ہائیکورٹ نے واقعہ کا فوری نوٹس لےلیا۔ چیف جسٹس اسلامآباد ہائیکورٹ نے بچی پر مبینہ تشدد کی فوری انکوائری کا حکم دے دیا۔
چیف جسٹس ہائیکورٹ انور کاسی نے رجسٹرار کو حکم دیا ہے کہ دو دن کے اندر واقعہ کی حقیقت کا پتہ لگایا جائے۔
اسلام آباد کے تھانہ آئی نائن میں بچی پرمبینہ تشدد کا مقدمہ بھی درج کرلیا گیا ہے۔ مقدمے میں حاضر سروس جج اور ان کی اہلیہ کونامزد کیا گیا ہے۔
مقدمے میں حبس بےجا میں رکھنے اورمارپیٹ کی دفعات شامل کی گئی ہیں، اندراج مقدمہ کے بعد تفتیش کا باقاعدہ آغازکردیاگیا ہے۔

SHARE

LEAVE A REPLY