امریکی انٹیلیجنس ایجنسیوں اور قانون نافذ کرنے والے اداروں کے خیال میں دہشت گرد تنظیموں نے لیپ ٹاپس اور دیگر الیکٹرانک آلات کے اندر بارودی مواد چھُپانے کے طریقے ڈھونڈ نکالے ہیں۔

یہ تفصیلات جرمن نیوز ایجنسی ڈی پی اے اور فرانسیسی نیوز ایجنسی اے ایف پی نے جمعے کے روز منظرِ عام پر آنے والی امریکی رپورٹوں کے حوالے سے بتائی ہیں۔ ڈی پی اے کے مطابق یہ نئی تفصیلات امریکا اور برطانیہ کے گزشتہ ہفتے کے اُن نئے اعلانات کی وضاحت کرتی ہیں، جن میں مشرقِ وُسطیٰ اور افریقہ کے کچھ ممالک سے آنے والی پروازوں پر مسافروں کو اپنے دستی سامان میں لیپ ٹاپس اور عام موبائل فون سے بڑے سائز کے الیکٹرانک آلات لے جانے سے منع کیا گیا تھا۔

فضائی سفر سے متعلق بین الاقوامی انجمن  نے امریکا اور برطانیہ کی طرف سے عائد کی گئی ان پابندیوں کو شدید تنقید کا نشانہ بنایا تھا۔

SHARE

LEAVE A REPLY