آخر کیا چاہتے ہیں یہ لوگ؟ !! سلیم کاوش

0
218

عدلیہ سے میری براہ راست التجا ہے کہ اپنا کام ذمہ داری سے کریں اور جامعات اور تمام درسگاہوں سے فی الفور سیاسی اور مذہبی جماعتوں کے طلبا ونگ ختم کریں.

ہر جماعت سے ایک ایک سربراہ کو لیکر ایک ضمانت نامہ پر دستخط لیں کہ اگر کسی جماعت کے جموروں نے کوئی باغیانہ اور شر پسندانہ حرکت کی تو سزا اس جماعت کے “اسی” ضامن کو دی جائے گی.

سیاسی اور مذہبی جماعتوں کو انسان کی عظمت اور اہمیت کا شعور آنا چاہیے.
اللہ کے بنائے ہوئے انسانوں کو کتوں کی طرح مارنے اور مروانے کا کهیل بند ہونا جاہیے.

ہماری قوم کی ماوں کے بہت سے لعل و سپوت سیاسی اور مذہبی تعصبات کی نذر ہو چکے.
آخر کیا چاہتے ہیں یہ لوگ؟
اس خرافات کی پنیری سے کونسی سیاسی اور مذہبی فصل تیار کرنا چاہتے ہیں.

میں نے کالج سے یونیورسٹی تک بہت سے ہم جماعتوں کو ان کے مذہبی اور سیاسی پیشواوں کیلیے مار کهاتے اور مرتے مارتے دیکها.

بہت سے معصوم جوان مکروہ عزائم کی بهینٹ چڑهہ چکے..

خدارا … اب بس کریں.

یہ بچے پڑهہ لکھ کر جب آپ کے پاس آجائیں اور آپ کی مذہبی و سیاسی جماعتوں کے رکن بن جائیں تو پهر انہیں کاروبار حکومت کی تربیت دے لینا…
خدارا!!!
بس .. بہت ہو چکا.
بہت سی آنکهیں اندهی ہو چکیں
بہت سی کمریں ٹوٹ چکیں!
بہت سے گهر بے در ہو چکے!
بہت سے مستقبل تاریک ہو چکے!

بس .. خدارا بس !!

(سلیم کاوش)

SHARE

LEAVE A REPLY