مشن جی ٹی روڈ آخری مرحلہ۔ لاہور میں پاور شو گا

0
77

صوبائی دارالحکومت میں سابق وزیراعظم کے استقبال کی تیاریاں جاری ہیں۔ شاہدرہ چوک پر نواز شریف کےاستقبالی بینرز اور پوسٹرز کی بہار ،شاہدرہ سے داتا دربار تک راوی روڈ عام ٹریفک کے لیے بند رہے گی۔ لاہور میں امامیہ کالونی سے داتا دربار تک قافلے کا استقبال ہو گا، نواز شریف کے 6 بجے تک لاہور کے داخلی استقبالی مقام امامیہ کالونی پہنچنے کا امکان ہے۔ لاہور میں امامیہ کالونی، کالاخطائی، شاہدرہ چوک، راوی ٹول پلازہ، نیازی چوک، ٹمبر مارکیٹ، آزادی چوک، لیڈی ولنگٹن ہسپتال، پیر مکی میں بڑے استقبالیہ اجتماعات ہوں گے۔ داتا دربار کے باہر اختتامی پوائنٹ ہو گا، داتا دربار اور شاہدرہ چوک میں نواز شریف کا خطاب ہو گا۔

نواز شریف کی لاہور کے لیے ریلی کا آج چوتھا روز ہے،سابق وزیراعظم کل رات سے پہلوانوں کے شہر گوجرانوالہ میں قیام پذیر ہیں۔ وہ آج گوجرانوالہ کے چندہ قلعہ بائی پاس سے لاہور کے لیے روانہ ہوں گے۔
نواز شریف کی نااہلی کے خلاف گوجرانوالہ کے پہلوان نے زنجیروں میں جکڑ کر احتجاج کیاجبکہ نواز شریف کے ساتھ سیلفی کے لیے ایک متوالے نے انوکھی درخواست بھی کی ہے۔

گوجرانوالہ پہنچنے پر ان کی مہمان نوازی وفاقی وزیرخرم دستگیرکے بہنوئی کی حویلی میں کی گئی۔ ڈنر میں سادہ کھانے کے ساتھ ساتھ پرتکلف اور خصوصی ڈشوں کا بھی اہتمام کیا گیا۔

کھانے میں دال گوشت،آلو گوشت،پائے، مٹن قورمہ ، دیسی مرغی کا سالن، باربی کیو اور ہاں گوجرانوالہ کے مشہور روایتی چڑے بھی دسترخواں سے زینت بنے ۔

کارکنوں نے اپنے لیڈر کا گوجرانوالہ میں جوش استقبال کیاجبکہ ماروی میمن گاڑی کی چھت پر چڑھ کر کارکنوں کا جوش بڑھاتی اور نعرے لگواتی رہیں۔

جہلم سے گوجرانوالہ کے دوران کا سفر بھی دیدنی تھا۔بھنگڑے، نعرے جوش و لولے کے ساتھ قافلہ تمام رنگوں سے لبریز تھا۔اپنے قائد کی سلامتی کے لیے کئی کارکنان نے راستے میں بکروں اور اونٹوں کی قربانی بھی دی ۔

SHARE

LEAVE A REPLY