پاکستان تحریک انصاف کے سربراہ عمران خان نےکہا ہے کہ حکمران فوج کو بدنام اور جمہوریت کو تباہ کررہے ہیں، میں نے 20 سال باہر کمائی کی، سارا پیسہ پاکستان لایا اور عدالت کے سامنے 40 سال کی منی ٹریل دیدی ہے۔
اسلام آباد میں میڈیا سے گفتگو میں چیئرمین پی ٹی آئی نے کہا کہ نیب کورٹ کےباہر ڈرامہ کیا گیا، فوج کو بدنام کیا جارہا ہے، یہ ملک کو جس نہج پر لے آئے ہیں ضروری ہے کہ ملک میں الیکشن ہو جائیں، قومی اسمبلی میں الیکشن بل کی مخالفت کریں گے۔
انہوں نے مزید کہا کہ جو ڈرامہ نیب کورٹ کےباہر ہوا، کیا احسن اقبال کو نہیں پتہ تھا کہ ایس ایس پی نے رینجرز کی تعیناتی کی درخواست کی تھی، میں وفاقی وزیر سے پوچھتا ہوں انہیں جمہوریت کی اسپیلنگ بھی آتی ہے؟ دراصل آپ فوج کو بدنام کررہے ہیں۔
عمران خان نے یہ بھی کہا کہ احسن اقبال نے جان بوجھ کر انگریزی میں ریاست کے اندر ریاست کے لفظ ادا کیے تاکہ بیرونی دنیابھی سنے، یہ جمہوریت کو تباہ کر رہے ہیں، یہ لوگ انصاف کی راہ میں رکاوٹیں ڈالنے کی کوشش کر رہے ہیں۔
ان کا کہنا تھا کہ ملک کے سب سےبڑے مجرم سے مجھے کمپیئر کیا جا رہا ہے، اپنی کمائی کا سارا پیسہ بینکنگ چینل سے پاکستان لایا ہوں، شریف خاندان سے پوچھا گیا کہ اربوں روپیہ کیسے آیا تو ایک بھی ٹرانزکشن نہیں بتائی، میں نے 40 سال کی منی ٹریل دے دی ہے۔
پی ٹی آئی چیئرمین کا کہناتھا کہ جمائما نے جو رقم میرے اکاؤنٹ میں منتقل کی وہ مجھے بھیج دی ہیں، مریم صفدر نے جو اربوں روپے کی جائیداد لی وہ نوازشریف کا پیسہ تھا جو باہر گيا۔
انہوں نے مزیدکہاکہ کیا ن لیگ اور خاقان عباسی کا یہ کام رہ گیا ہےکہ اتنے بڑے مجرم کی چوری بچائے؟ یہ آج نواز شریف کو پارٹی قائد بنا رہے ہیں، کل کسی قاتل کو بھی اجازت دے دیں گے کہ پارٹی ہیڈ بن جائے۔

SHARE

LEAVE A REPLY