اسلام آباد کی قائداعظم یونیورسٹی میں کشیدگی برقرار ہے، طلبہ گروپوں میں تصادم کےباعث جامعہ آج بھی بند ہے۔ یونیورسٹی کے داخلی راستوں پرپولیس تعینات کرکے سیکورٹی سخت کردی گئی ہے۔
احتجاجی طلبہ کا کہنا ہے مطالبات پورےہونےتک کلاسزکابائیکاٹ جاری رہےگا ۔

انتظامیہ کا کہنا ہے یونیورسٹی کھولے جانے سےمتعلق حتمی طورپرکچھ نہیں کہا جاسکتا۔
کشیدگی صورت حال کے باعث یونیورسٹی میں سیکورٹی سخت کردی گئی ہے جبکہ داخلی راستوں پر پولیس اہلکار تعینات ہیں ۔
احتجاجی طلبہ کا موقف ہے کہ مطالبات پورےہونےتک کلاسزکابائیکاٹ جاری رہےگا ۔

ادھرقائداعظم یونیورسٹی کےاحتجاجی طلبہ کےخلاف گزشتہ روزایک اورمقدمہ درج کیاگیاتھا۔
پولیس کے مطابق مقدمے میں طلبہ پریونیورسٹی میں گاڑیوں کےشیشےتوڑنے اور ٹائروں سے ہوا نکالنے کا الزام ہےجبکہ طلبہ نےیونیورسٹی کی گاڑیوں کے ڈرائیوروں کو مارا پیٹا اور چابیاں چھین لیں۔

SHARE

LEAVE A REPLY