کافی جگر کے امراض، کینسر وغیرہ سے بچانے میں مددگار

0
195

ساﺅتھ ہیمپٹن یونیورسٹی کی تحقیق کے مطابق معتدل مقدار میں کافی پینے کی عادت جگر کے امراض، کینسر وغیرہ سے بچانے میں مددگار ثابت ہوسکتی ہے۔

اس تحقیق کے دوران کافی پینے سے انسانی جسم پر مرتب ہونے والے اثرات کا جائزہ لینے والی دو سو سے زائد طبی تحقیقی رپورٹس کو دیکھا گیا۔

ان طبی تحقیقی رپورٹس کے نتائج میں بتایا گیا تھا کہ روزانہ تین سے چار کپ کافی پینے کی عادت دل کے مسائل کا خطرہ کم کرتی ہے جبکہ سب سے زیادہ نمایاں فائدہ جگر کے امراض کے خطرے میں کمی لانے کی شکل میں ہوتا ہے۔

اس نئی تحقیق میں یہی بات سامنے آئی کہ معتدل مقدار میں اس گرم مشروب کا استعمال نقصان کی بجائے صحت کے لیے فائدہ مند ثابت ہوتا ہے۔

محققین نے دریافت کیا کہ اسے پینے کی عادت خون کی شریانوں کے مسائل، ذیابیطس، کینسر، جگر پر چربی چڑھنے کے امراض وغیرہ سے بچاتی ہے۔

محققین کا کہنا تھا کہ زیادہ نہیں بلکہ معتدل مقدار میں اس گرم مشروب کا استعمال ہی صحت کے لیے فائدہ مند ہے، جبکہ اس حوالے سے مزید تحقیق کی ضرورت ہے کہ کس قسم کی کافی صحت کے لیے زیادہ فائدہ مند ہے۔

SHARE

LEAVE A REPLY