آسٹریلوی بولرز کی شاندار بولنگ کے باعث انگلینڈ کی ٹیم آسٹریلیا کے 442رنز کے جواب میں 227رنز پر ڈھیر ہوگئی،اس طرح میزبان ٹیم نے پہلی اننگز میں 215رنز کی برتری حاصل کرلی ہے۔
ایڈیلیڈ ٹیسٹ کے تیسرے روز انگلینڈ نے 29رنز ایک کھلاڑی آؤٹ پر اننگز دوبارہ شروع کی، اسکور میں صرف 2رنز کا اضافہ ہوا تھا کہ جیمس ونس صرف دو رنز بناکر ہیزل ووڈ کی گیند پر وکٹ کیپر پین کے ہاتھوں کیچ آؤٹ ہوگئے۔
آسٹریلوی بولرز کو اگلی وکٹ کے لیے بھی زیادہ تگ و دو نہیں کرنی پڑی اور کپتان جو روٹ کومنز کی گیند پر بین کرافٹ کو کیچ دے بیٹھے، وہ صرف 9رنز یہ بناسکے۔
اوپنر الیسٹر کک 37 رنز کی اننگز کھیل کر آؤٹ ہوئے، ڈیوڈ ملان 19رنز بناکر آؤٹ ہوئے، 102 رنز پر انگلینڈ کی آدھی ٹیم پویلین سدھار چکی تھی۔
وکٹیں گرنے کا سلسلہ یہیں نہیں تھما، معین علی بھی لمبی اننگز نہ کھیل سکے اور 25رنز بناکر پویلین کی راہ لی، بیرسٹو 21 جبکہ ووکس 36رنز بناکر آؤٹ ہوئے، اوورٹن نے ناقابل شکست 41رنز کی اننگز کھیلی۔
یوں آسٹریلیا کے 442 رنز کے جواب میں انگلش ٹیم 76اعشاریہ ایک اوور میں 227رنز بناکر آؤٹ ہوگئی اوراسے 215رنز کے حسارے کا سامنا کرنا پڑا۔
آسٹریلیا کی طرف سے لایون نے 4، اسٹارک نے 3، کومنز نے 2 اور ہیزل ووڈ نے ایک کھلاڑی کو آؤٹ کیا۔

SHARE

LEAVE A REPLY