سابق وزیر اعظم اور ن لیگ کے رہنما نواز شریف نے کہا ہے کہ بلوچستان میں جو کچھ ہوا قوم کےساتھ گھناؤنا مذاق تھا، 500ووٹ لینے والے کو وزیر اعلیٰ بنا دیاگیا، جس کی ضمانت ضبط ہونی تھی، اس کو وزیر اعلیٰ بنایا گیا۔ جلد بلوچستان سے متعلق اجلاس بلارہے ہیں، بلوچ لیڈر شپ کو مدعوکرینگے۔

احتساب عدالت کے باہر میڈیا سے گفتگو میں نوازشریف کا ریفرنسز سے متعلق کا کہنا تھا کہ اس کیس میں کچھ بھی نہیں ہے، کیس کیا ہے اس کی نوعیت کیا ہے، کیس میں کتنی جان ہے میڈیاسب جانتا ہے۔ آپ یہاں پروسیڈنگ میں موجود ہوتے ہیں آپ کومعلوم ہے کیس کیا ہے۔

اپوزیشن جماعتوں کی احتجاجی تحریک کے بارے میں ان کاکہنا تھا کہ حکومتی مدت پوری ہونے میں چار پانچ مہینے ہیں، مولانا صاحب خاص طور پر اس وقت کیوں کینیڈا سے آئے ہیں، اس وقت تحریکوں کا کیا مقصد ہے۔ آپ مقصد کی طرف دیکھیں گے تو سوالات کے جواب مل جائیں گے۔

SHARE

LEAVE A REPLY